پاکستان سپورٹس بورڈ کے مستقل ڈی جی کا عہدہ دو سال سے خالی،کئی اہم فیصلے تعطل کا شکار

پاکستان سپورٹس بورڈ کے مستقل ڈی جی کا عہدہ دو سال سے خالی،کئی اہم فیصلے تعطل ...
پاکستان سپورٹس بورڈ کے مستقل ڈی جی کا عہدہ دو سال سے خالی،کئی اہم فیصلے تعطل کا شکار

  



اسلام آباد(آئی این پی) پاکستان سپورٹس بورڈ کے مستقل ڈی جی کا عہدہ گزشتہ دو سال سے خالی ہے، 28فروری 2018کو اختر گنجیرا کی ریٹائرمنٹ کے بعد مستقل ڈی جی کی تعیناتی نہ تاحال ہوسکی۔

تفصیلات کےمطابق پاکستان سپورٹس بورڈ کو دو سال سےکوئی ڈائریکٹر جنرل نہیں ملا،ادارے میں28فروری2018سے ابتک مستقل ڈی جی کی تعیناتی نہ ہو  سکی۔اس حوالےسےذرائع کاکہنا ہےکہ مستقل ڈی جی نہ ہونے سے فنڈزکے استعمال سمیت دیگر اہم فیصلے بھی تعطل کا شکار ہیں،دو سال سے وفاقی بجٹ میں کھیلوں کیلئے مختص فنڈز استعمال نہیں ہوسکے ہیں۔بجٹ میں کھیلوں کے فروغ کیلئے رکھے گئے فنڈز سرکاری خزانے میں واپس جمع کرادیے گئے، حکومت نے رواں سال6آسٹروٹرف کیلئے523 ملین روپے مختص کئے تھے، اسلام آباد، واہ کینٹ، پشاور، ایبٹ آباد، فیصل آباد اور کوئٹہ کیلئے فنڈز رکھے گئے،7ماہ گزر گئے فنڈز کا استعمال ہوا نہ کھیل کے میدانوں کی حالت بدلی۔ذرائع کے مطابق پاکستان سپورٹس کمپلیکس سمیت ملک بھر میں کھیلوں کے میدان ٹوٹ پھوٹ کا شکار ہیں، اس کے علاوہ پاکستان سپورٹس بورڈ کی جانب سے ڈیڑھ سال سے کوئی بڑا کیمپ بھی نہیں لگایا جا سکا اور ساتھ ایشین گیمز2021کی میزبانی پاکستان کو ملی مگر لائحہ عمل نہ بن سکا۔

مزید : کھیل