پتنگ بازی جان لیوا کھیل ، پولیس کسی بھی غیر قانونی سرگرمی کی ہر گز اجازت نہیں دے گی:غلام محمود ڈوگر 

پتنگ بازی جان لیوا کھیل ، پولیس کسی بھی غیر قانونی سرگرمی کی ہر گز اجازت نہیں ...
پتنگ بازی جان لیوا کھیل ، پولیس کسی بھی غیر قانونی سرگرمی کی ہر گز اجازت نہیں دے گی:غلام محمود ڈوگر 

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) سربراہ لاہور پولیس غلام محمود ڈوگر نے کہا ہے کہ پتنگ بازی جان لیوا کھیل ہے،لاہور پولیس شہریوں کی زندگی کے لئے خطرہ بننے والی کسی بھی غیر قانونی سرگرمی کی ہر گز اجازت نہیں دے گی۔ غلام محمود ڈوگر نے کہا کہ کائٹ فلائٹ ایکٹ کی خلاف ورزی کے مرتکب افراد کی مستقل سرکوبی کے لئے سزائیں مزید سخت بنانے اور سپلائی لائن روکنے کے لئے ایف آئی اے، وزارت کامرس، ایف بی آر سمیت مختلف وفاقی اداروں کے  تعاون سے مشترکہ لائحہ عمل اختیارکرنے کی تجاویز بھی زیر غور ہیں۔

کیپیٹل سٹی پولیس افسر(سی سی پی او) لاہور غلام محمود ڈوگر نے کہا کہ موجودہ قانون نرم ہونے کی وجہ سے اکثر اس خطرناک سرگرمی میں ملوث افراد بچ جاتے ہیں جس کے پیش نظر لاہور پولیس آپریشن ونگ نے پنجاب پروبیشن آف کائٹ فلائنگ آرڈیننس2001ء  میں ترامیم کے لئے ٹھوس تجاویز پیش کی ہیں جنہیں وزیر اعلٰی پنجاب کی منظوری کے بعد باقاعدہ قانون کی شکل دی جائے گی۔

سی سی پی او لاہور نے بتایا کہ شہریوں کی زندگی کی حفاظت یقینی بنانے کے لئے پتنگ فروشوں، مینوفیکچررز اور پتنگ بازوں کے جرم کی نوعیت کے اعتبار سے سزاوں میں اضافہ تجویز کیا گیا ہے۔ تجاویز کے تحت کائٹ مینوفیکچرنگ کی حوصلہ شکنی کے لئے سزا ایک سال  سے پانچ سال تک قید یا پانچ  لاکھ سے 20 لاکھ روپے جرمانہ یا دونوں سزائیں اکٹھی دینے کی تجویز دی گئی ہے۔ اسی طرح پتنگ فروشی کی صورت میں ایک سال سے پانچ  سال قید یا دو   لاکھ سے پانچ  لاکھ روپے جرمانہ یا دونوں سزائیں اکٹھی تجویز کی گئی ہیں۔

پتنگ بازی کی صورت میں تین ماہ سے ایک سال قید یا 50 ہزار سے ایک لاکھ روپے تک جرمانہ یا دونوں سزائیں اکٹھی دینے کی تجاویز دی گئی ہیں۔ پولیس تجاویز کے مطابق پتنگ سازی،پتنگ فروشی اور مینوفیکچرنگ کے اس آرگنائزڈ جرم میں ملوث فیس بک پیجز،ویب سائٹس کے خلاف ایف آئی اے سائبر کرائم کاروائی کرنے کا مجاز ہو گا۔ لاہور پولیس کی مجوزہ تجاویز کےمطابق ایف بی آر اور وزارت کامرس کو کیمیکل ڈور کی تیاری میں استعمال ہونےوالےنائیلون دھاگےاور دیگر تاروں کی امپورٹ روکنے کے لئے رجوع کیا جائے گا۔

سی سی پی او لاہور غلام محمود ڈوگر نے پولیس افسران کو پتنگ بازی کیخلاف سخت کریک ڈاؤن کاحکم دیا ہے اور پتنگ بازی، پتنگ سازی اور پتنگ فروشی  میں ملوث عناصر کیخلاف وسیع پیمانے پر کاروائی کی ہدایت دیتے ہوئے کہا کہ پتنگ بازی کی شکایت پر متعلقہ ایس ایچ او کے خلاف سخت کارروائی کی جائے گی، تھانے کی سطح پر پتنگ بازی کی روک تھام اور اس حوالے سے موجود قانون کی خلاف ورزی کرنے والوں کی سرکوبی کیلئے خصوصی ٹیمیں تشکیل دی جائیں۔سی سی پی او لاہور نے ڈولفن سکواڈ اور پولیس ریسپانس یونٹ ٹیموں کو بھی دوران پٹرولنگ  پتنگ بازی ایکٹ کی خلاف ورزی کرنے والوں کی مانیٹرنگ کی ہدایت کی۔

غلام محمود ڈوگر نے پتنگ بازوں کی ڈیجیٹل مانیٹرنگ اور فیس بک سمیت سوشل میڈیا کے ذریعے آن لائن خرید و فروخت کرنے والوں کے خلاف بھی سخت کریک ڈاؤن کا حکم دیتے ہوئے کہاکہ کائٹ مینوفیکچررز، ہول سیل ڈیلرز اور تندی ڈور ایکسپورٹرز کیخلاف زیرو ٹولرنس پالیسی پر سختی سے عملدرامد یقینی بنایا جائے۔ لاہور پولیس نے رواں ماہ پتنگ بازی ایکٹ کی خلاف ورزی پر 43 ملزمان کو گرفتارکرکے مختلف تھانوں میں 41 مقدمات درج کئے۔دوران کاروائی ملزمان کے قبضہ سے 55 چرخیاں، 1480 پتنگیں برآمد اور دیگر سامان بھی برامد کیا گیا۔لاہور پولیس کے سربراہ نے شہریوں خصوصاً والدین سے اپیل کی ہے کہ وہ ذمہ داری کا مظاہرہ کریں,بچوں پر کڑی نظر رکھیں اور انہیں اس جان لیوا برائی سے دور رکھیں۔  

مزید :

علاقائی -پنجاب -لاہور -