ہوٹلوں پر چھاپوں سے فوڈ انڈسٹری بر ی طرح متاثر ہو رہی ہے،کامران شیخ

ہوٹلوں پر چھاپوں سے فوڈ انڈسٹری بر ی طرح متاثر ہو رہی ہے،کامران شیخ

لاہور(کامرس رپورٹر)لاہور ریسٹورنٹ ایسوسی ایشن نے پنجاب فوڈ اتھارٹی کی انتظامیہ سے مذاکرات کی درخواست کی اور کہا ہے کہ اتھارٹی کی جانب سے ریسٹورنٹس پر چھاپوں اور سوشل میڈیا پر تصاویر جاری ہونے سے لاہور کی فوڈ انڈسٹری بری طرح متاثر ہو رہی ہے ۔لاہور ریسٹورنٹس کے مالکان پنجاب فوڈ اتھارٹی کے ساتھ بیٹھ کر نئے قوانین بنانے پر تیار ہیں لیکن اتھارٹی فوری طور پر چھاپے مارنے بند کر دے ان خیالات کا اظہار ایسوسی ایشن کے صدر کامران شیخ اور سیکرٹری جنرل احمد شفیق نے لاہور پریس کلب میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ایسوسی ایشن کے عہدیداران نے الزام لگایا کہ پنجاب فوڈ اتھارٹی کے اہلکار ہوٹلوں اور ریسٹورنٹس کو نوٹس دیئے بغیر بند کر رہے ہیں اور بھاری جرمانے کر رہے ہیں جس سے ہوٹل انڈسٹری بری طرح متاثر ہو رہی ہے جبکہ ہزاروں ملازمین کے بے روزگار ہونے کا بھی خدشہ ہے ۔انہوں نے کہا کہ لاہور ریسٹورنٹس ایسوسی ایشن کے رجسٹرڈ ممبرز کی تعداد 400کے قریب ہے جو سب سیلز ٹیکس میں رجسٹرڈ ہیں اور حکومت کو اربوں روپے کا ٹیکس دیتے ہیں لیکن پنجاب فوڈ اتھارٹی کے چھاپوں کی وجہ سے ہوٹل مالکان شدید پریشانی کا شکار ہیں انہوں نے کہا کہ ایسوسی ایشن پنجاب فوڈ اتھارٹی سے تمام معاملات بہتر بنانے کی خواہاں ہے ۔ہماری وزیراعلی پنجاب محمد شہباز شریف سے اپیل ہے کہ وہ پنجاب فوڈ اتھارٹی کو ہدایت کریں کہ وہ لاہور ریسٹورنٹس ایسوسی ایشن کے ساتھ مذاکرات کرے۔دریں اثناء شہری و سماجی تنظیموں نے پنجاب فوڈ اتھارٹی کی انتظامیہ کی جانب سے غیر معیاری اور ناقص فوڈز فراہم کرنے والے ہوٹلوں اور ریسٹورنٹس کے خلاف کارروائی کو سراہا ہے اور فوڈ انتظامیہ کی سربراہ عائشہ ممتاز کو خراج تحسین پیش کیا ہے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1