پولیس کی بے حسی سے تنگ 4بچوں کے باپ نے تھانہ کے سامنے خود کو آگ لگا لی ،حالت تشویشناک

پولیس کی بے حسی سے تنگ 4بچوں کے باپ نے تھانہ کے سامنے خود کو آگ لگا لی ،حالت ...
پولیس کی بے حسی سے تنگ 4بچوں کے باپ نے تھانہ کے سامنے خود کو آگ لگا لی ،حالت تشویشناک

  

لاہور(کرائم سیل) پولیس کی بے حسی سے تنگ آ کر 4بچوں کے باپ نے انصاف نہ ملنے پر تھانہ ہڈیارہ کے سامنے خود کو آگ لگا دی ،ہسپتال میں حالت تشویشناک۔نمائندہ’’ پاکستان‘‘ سے گفتگو کرتے ہوئے متاثرہ شخص محمود احمد بھٹی کے بھائیو ں اور رشتہ داروں نے بتایا کہ محمود احمد بھٹی ہڈیارہ کا رہائشی ہے اور کئی سال سے اس کا اپنے بھائی اللہ دتہ کے ساتھ زمین کا تنازع چل رہا ہے ۔ اللہ دتہ نے ایک ٹھیکیدار سے ملی بھگت کر کے اس کی زمین پر قبضہ کر لیا ہے جس سے متعلق اس نے تھانہ ہڈیارہ میں درخواست بھی دی تھی لیکن پولیس کی جانب سے روایتی ٹال مٹول کا سامنا کرنا پڑ رہا تھا۔گزشتہ روز بھی وہ تھانہ ہڈیارہ میں اپنی درخواست پر عملدرآمد کے سلسلے میں گیا لیکن پولیس اہلکاروں نے درخواست گم ہو جانے کا بہانہ کر کے اس کو ٹر خا دیا جس پر وہ انتہائی دلبرداشتہ ہو گیا اور اس نے تھانہ ہڈیارہ کے مین گیٹ کے سامنے کھڑے ہو کر خود پر پٹرول چھڑک لیا اور آگ لگا دی ۔مقامی افراد نے اس کو سنبھالا اور آگ بجھا کر ریسکیو ٹیم کو اطلاع دی جنہوں نے فوری موقع پر پہنچ کر زخمی کو قریبی ہسپتال میں منتقل کیا جہاں اس کی حالت انتہائی تشویشناک بتائی جاتی ہے ۔ڈاکٹروں کے مطابق محمود بھٹی کے جسم کا زیادہ تر حصہ جل گیا ہے جس کی وجہ سے اس کی جان کو شدید خطرہ لاحق ہے ۔انہوں نے بتایا کہ محمود بھٹی کئی ہفتوں سے تھانہ ہڈیارہ کے چکر لگا رہا تھا لیکن پولیس اہلکاروں کے عدم تعاون کی وجہ سے اس نے یہ انتہائی قدم اٹھایا ہے، ان اہلکاروں کے خلاف پولیس حکام کاررروائی کریں ۔ اس حوالے سے کئی بار ایس ایچ او ہڈیارہ سے رابطہ کرنے کی کوشش کی گئی لیکن ان سے رابطہ ممکن نہ ہو سکا۔

مزید : علاقائی