دہشت گردی کے خاتمے کیلئے نیشنل ایکشن پلان پر عمل درآمد جاری ہے، رفیق رجوانہ

دہشت گردی کے خاتمے کیلئے نیشنل ایکشن پلان پر عمل درآمد جاری ہے، رفیق رجوانہ

لاہور ( نمائندہ خصوصی) پاکستان میں فرانس کی سفیرمسزمارٹن ڈورنس نے پنجاب کے گورنر ملک محمد رفیق رجوانہ سے ملاقات کی۔ ملاقات میں باہمی دلچسپی کے امور اور دوطرفہ تعاون کو فروغ دینے کے حوالے سے مختلف معاملات پر تبادلہ خیال کیا گیا۔اس موقع پر گورنر پنجاب نے کہا کہ پاکستان میں دہشت گردی اور توانائی کے بحران پر قابو پانے کے لیے مخلصانہ اقدامات کیے جا رہے ہیں، وزیر اعظم محمد نواز شریف کی مخلصانہ قیادت میں اٹھائے گئے اقدامات کے مثبت نتائج سامنے آنا شروع ہو گئے ہیں ،پوری قوم دہشت گردی ،انتہاپسندی اور فرقہ واریت کے ناسورکوختم کرنے کے لیے پُر عزم ہے۔ انہوں نے کہاکہ پوری پاکستانی قوم ،افواجِ پاکستان اور قانون نافذ کرنے والے اداروں کے ساتھ سیسہ پلائی دیوار کی طرح کھڑی ہے۔ گورنر پنجاب نے کہا کہ پنجاب میں بھی دہشت گردی کے خاتمے کے لیے نیشنل ایکشن پلان پر موثر عمل درآمد جاری ہے اور دہشت گردوں کے ساتھ کاروائی عمل میں لائی جا رہی ہے۔گورنر پنجاب نے کہا کہ اس وقت ملک کے بیشتر علاقے طوفانی بارشوں کی وجہ سے سیلاب کی زد میں ہیں ۔وزیر اعظم محمد نواز شریف اور وزیر اعلیٰ پنجاب محمد شہباز شریف سیلاب زدہ علاقوں کا ہنگامی بنیادوں پر دورہ کر رہے ہیں اور عوام کو ریلیف دینے کے لیے ہر ممکن اقدامات اُٹھائے جا رہے ہیں۔گورنر پنجاب نے کہا کہ پاکستان اپنے دوست ملکوں سے اقتصادی اور تجارتی تعاون کو فروغ دیتے ہوئے معاشی ترقی کے اہداف حاصل کرنا چاہتا ہے اور اس سلسلے میں فرانس پاکستان کے ترجیحی ملکوں میں شامل ہے ۔ انہوں نے کہا کہ موجودہ حکومت کی مدبرانہ اقتصادی پالیسیوں کے نتیجے میں پاکستان کی معیشت بہتری کی طرف گامزن ہے ، غیر ملکی سرمایہ کاروں کی طرف سے پاکستان میں سرمایہ کاری کو ترجیح دینا بھی درحقیقت حکومت کے اقتصادی وژن پر اعتماد کااظہار ہے ۔ انہوں نے کہا کہ فرانس کے لیے پاکستان میں سرمایہ کاری کے لیے بے پنا ہ مواقعے موجود ہیں اور فرانس کے سرمایہ کاروں کو اس حوالے سے تمام ضروری سہولتیں فراہم کی جائیں گی۔فرانس کی سفیر نے حکومت کے اقتصادی وژن کو سراہتے ہوئے پاکستان کے ساتھ اقتصادی شعبے میں تعاون کو مزید وسعت دینے کا عز م کیا ۔ انہو ں نے کہا کہ فرانس پاکستان میں مختلف شعبوں میں دوطرفہ تعاون کومزید فروغ دینا چاہتا ہے۔انہوں نے کہا کہ صوبہ پنجاب بالخصوص لاہور میں آکر بڑی خوشی محسوس کرتی ہوں کیونکہ یہ شہر پاکستان کا ثقافتی، تعلیمی اور پُرانی شاندار روایات کا مرکز ہے اور یہ بات انتہائی قابلِ تعریف و ستائش ہے کہ یہاں کے باسیوں نے ان روایات کو احسن طریقے سے قائم رکھا ہوا ہے۔بعد ازاں، گورنر پنجاب ملک محمد رفیق رجوانہ سے گورنر ہاؤس لاہور میں آل پنجاب کمسٹ ایسوسی ایشن کے نمائندوں کے وفد نے محمد اختر بٹ کی قیادت میں ملاقات کی۔ ملاقات میں وفد نے گورنر پنجاب کو انہیں درپیش مسائل کے بارے میں آگاہ کیا۔وفد میں رانا محمد نعیم،چوہدری نصار احمد کے علاوہ شیخ عبدالجبار شامل تھے۔ گورنر پنجاب نے کہا کہ صحت مند معاشرہ ہی کسی بھی ملک کی ترقی کا اہم جز ہوتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ غیرمعیاری اور جعلی ادویات کی فروخت ناقابل معافی جرم ہے۔ گورنر پنجاب نے وفد کو یقین دلایا کہ حکومت ان کے مسائل کو دور کرنے کے لئے اپنے تمام تر وسائل کو بروئے کار لائے گی۔

رفیق رجوانہ

مزید : صفحہ آخر