قائمہ کمیٹی کی سمندر پار پاکستانیوں کو ووٹ کا حق دینے, ملک میں آمد اور واپسی کیلئے بہتری سہولیات کی فراہمی کی سفارش کردی

قائمہ کمیٹی کی سمندر پار پاکستانیوں کو ووٹ کا حق دینے, ملک میں آمد اور واپسی ...

اسلام آباد ( آئی این پی ) سینیٹ کی قائمہ کمیٹی سمندر پار پاکستانیزنے متفقہ طور پر سمندر پار پاکستانیوں کو ووٹ کا حق دینے کی سفارش کرتے ہوئے کہاہے کہ ان کی جائیدادوں کا مکمل تحفظ کرنے کے علاوہ سرکاری اور پرائیویٹ ایجنٹس کے ذریعے بیرون ملک ملازمت کے لئے جانے والے افراد کی پولی ٹیکنیک اداروں اور وزارت کے ذریعے تربیت کا بندوبست کیا جا نا چاہیے ، چیئر مین کمیٹی باز محمد خان نے وزارت سمندر پار پاکستانیوں اور دوسرے اداروں کی کارکردگی کو مزید بہتر بنانے اور سمندر پار پاکستانیوں کی بھیجی گئی اربوں روپے مالیت کی رقوم کی وجہ سے ملکی معیشت بہتر ہونے پر اطمینان کا اظہار کرتے ہوئے ہدایت دی کہ ملکی معیشت کی ریڑھ کی ہڈی سمندر پار پاکستانیوں کی طرف سے بھیجے گئے زر مبادلہ سے قوم اور ملک کا بھر پور فائدہ ہے، سینیٹر رحمان ملک نے کم عمر بچوں کو مشرق وسطیٰ کے ممالک میں اونٹوں کی دوڑ میں شامل کرنے اور جعلی ایجنٹوں کے خلاف سخت کاروائی کی تجویز دی اور کہا کہ جعلی ایجنٹوں کے ذریعے جانیوالے پاکستانی دنیا بھر میں منشیات فروشی کے ذریعے بدنامی کا باعث بن رہے ہیں ۔سینیٹر نجمہ حمید نے تجویز دی کہ وزارت اس بات پر پابندی لگائے کہ غیر تربیت یافتہ افراد بیرون ملک نہ جا سکیں۔ منگل کو سینیٹ کی قائمہ کمیٹی سمندر پار پاکستانیزکا اجلاس چیئر مین قائمہ کمیٹی سینیٹر باز محمد خان کی صدارت میں منعقد ہوا جس میں سیکریٹری وزارت اور وزارت سے ملحقہ اداروں بیورو آف امیگریشن ، اورسیز ایمپلائمنٹ کارپوریشن ای او بی آئی اور اورسیز پاکستانی فاؤنڈیشن کی کارکردگی مسائل کے حوالے سے تفصیلی بریفنگ لی گئی اور خیبر پختونخواہ ورکرز ویلفئیر بورڈ کے ملازمین کے صدر کی طرف سے چیئر مین سینیٹ کو بھجوائی گئی عوامی عرضداشت پر سیکریٹری کے پی کے سے بھی تفصیلات لی گئیں۔کمیٹی کے چیئر مین باز محمد خان نے وزارت سمندر پار پاکستانیوں اور دوسرے اداروں کی کارکردگی کو مزید بہتر بنانے اور سمندر پار پاکستانیوں کی بھیجی گئی اربوں روپے مالیت کی رقوم کی وجہ سے ملکی معیشت بہتر ہونے پر اطمینان کا اظہار کرتے ہوئے ہدایت دی کہ ملکی معیشت کی ریڑھ کی ہڈی سمندر پار پاکستانیوں کی طرف سے بھیجے گئے زر مبادلہ سے قوم اور ملک کا بھر پور فائدہ ہے ۔سمندر پار پاکستانیوں کے بیرون ملک مسائل کو حل کرنے کیلئے زیادہ کوششوں کی ضرورت ہے اور پاکستان میں ان خاندانوں کی جائیدادوں کارخانوں کی خفاظت ترجیحی بنیادوں پر کی جانی چاہیے اور ملک میں آمد اور واپسی پر بہترین سہولیات کی فراہمی کا بندوبست کیا جائے ۔کمیٹی کے اجلاس میں متفقہ طور پر سمندر پار پاکستانیوں کو ووٹ کا حق دینے کی سفارش کی گئی اور ان کے جائیدادوں کا مکمل تحفظ کرنے کے علاوہ سرکاری اور پرائیویٹ ایجنٹس کے ذریعے بیرون ملک ملازمت کے لئے جانے والے افراد کی پولی ٹیکنیک اداروں اور وزارت کے ذریعے تربیت کا بندوبست کیا جا نا چاہیے ۔ سینیٹر رحمان ملک نے کہا کہ کم عمر بچوں کو مشرق وسطیٰ کے ممالک میں اونٹوں کی دوڑ میں شامل کرنے اور جعلی ایجنٹوں کے خلاف سخت کاروائی کی تجویز دی اور کہا کہ جعلی ایجنٹوں کے ذریعے جانیوالے پاکستانی دنیا بھر میں منشیات فروشی کے ذریعے بدنامی کا باعث بن رہے ہیں ۔سینیٹر نجمہ حمید نے تجویز دی کہ وزارت اس بات پر پابندی لگائے کہ غیر تربیت یافتہ افراد بیرون ملک نا جا سکیں ۔وفاقی وزیر صدرالدین شاہ راشدی نے کہا کہ سمندر پار پاکستانیوں کو ووٹ کا حق دینے کا معاملہ سپریم کورٹ میں ہے حکومت کو کوئی اعتراض نہیں سکلڈ ورکرز کی ہمارے پاس کمی ہے اور بیرون ملک طلب زیادہ ہے بعض ممالک کے حکمران خاندان کے افراد بھی ویزوں کا کاروبار کر رہے ہیں جسکی وجہ سے پرائیویٹ ٹریول ایجنٹ جعلی سازی اور دھوکہ دہی کرتے ہیں ۔سینیٹر رحمان ملک ،نجمہ حمید نے تجویز دی کہ نرسوں کی تربیت کے لئے عملی اقدامات کئے جائیں جس پر وفاقی وزر پر سید صدرلدین شاہ راشدی نے کہا کہ ایف ایٹ اسلام آباد میں الشفاء انٹرنیشنل ہسپتال کے تعاون سے سالانہ 50نرسوں کی تربیت کا پروگرام ہے ۔ ایک نر س کی چار سالہ ڈگری پر 20لاکھ روپے خرچ ہونگے اورسیز پاکستانیوں کے تمام قوائف کو کمپیوٹراز کرنے کے لئے نادرا سے لنک کیا جا رہا ہے ۔کمیٹی میں آگاہ کیا گیا کہ مختلف ممالک میں 41لاکھ پاکستانی ملازمتیں کر رہے ہیں ۔2014تک پندرہ ملین ڈالر زر مبادلہ آیا۔

ووٹ کا حق

مزید : صفحہ آخر