سانحہ ماڈل ٹاؤن کے مجرموں کو بچانا کونسی جمہوریت ہے، کامل آغا،ظہیرالدین

سانحہ ماڈل ٹاؤن کے مجرموں کو بچانا کونسی جمہوریت ہے، کامل آغا،ظہیرالدین

لاہور(پ ر) پاکستان مسلم لیگ کے مرکزی سیکرٹری اطلاعات سینیٹر کامل علی آغا اور جنرل سیکرٹری پنجاب چودھری ظہیرالدین خان نے کہا ہے کہ اپوزیشن جماعتوں کے بے گناہ کارکنوں کو قتل کرانے، قاتلوں کو بچانے والے ماڈل ٹاؤن میں 12بیگناہوں کے قتل کے سرغنہ رانا ثناء اللہ کو دوبارہ قانون کی وزارت دینا جمہوریت اور حکمرانوں کے اپنے منہ پر طمانچہ ہے۔ انہوں نے ایک مشترکہ بیان میں کہا کہ رانا ثناء اللہ جیسے قانون شکن کو نوازنے سے ثابت ہو گیا کہ وہ حکمرانوں کا ٹاؤٹ ہے اور ان کے احکامات و خواہشات کی تکمیل کرتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ اپنے سیاہ کرتوتوں اور شکل جیسے بیانات دینے والے کا جیل کی سلاخوں کے پیچھے ہونے کی بجائے ایک بار پھر وزارت کی مسند پر بیٹھنا پنجاب کی تاریخ کا شرمناک باب ہے۔ مسلم لیگی رہنماؤں نے کہا کہ یہ حکمرانوں کی بیڈگورنینس کی بدترین مثال ہے اگر سانحہ ماڈل ٹاؤن کے مجرم بچائے نہ جاتے تو فیصل آباد میں بھی دن دیہاڑے اور سرعام بیگناہ کا خون نہ بہتا، اس سے بڑی زیادتی کیا ہو گی کہ 12بیگناہ خون میں نہلا دئیے گئے اور حکومت ابھی تک کسی کو ملزم تک قرار نہیں دے سکی

مزید : صفحہ آخر