20 سالہ چینی لڑکی نے سڑک پر احتجاج کر کے باپ سے نیا آئی فون لے لیا

20 سالہ چینی لڑکی نے سڑک پر احتجاج کر کے باپ سے نیا آئی فون لے لیا
 20 سالہ چینی لڑکی نے سڑک پر احتجاج کر کے باپ سے نیا آئی فون لے لیا

  

بیجنگ(مانیٹرنگ ڈیسک) بچوں میں ایک رویہ عام پایا جاتا ہے کہ جب انہیں ان کے والدین کوئی چیز لے کر نہیں دیتے تو اورکچھ نہ بن پڑنے پر وہ احتجاجاً زمین پر ادھر سے ادھر لیٹتے جاتے ہیں اور روتے ہیں، یقیناًبچپن میں آپ بھی ایسا ہی کرتے ہوں گے لیکن آپ نے کبھی کسی 20سال کے جوان لڑکے یا لڑکی کو چیز نہ ملنے پر اس طرح زمین پر لیٹتے اور روتے ہوئے نہیں دیکھا ہو گا۔چین کے وسطی صوبے ہیوبی کے دارالحکومت ووہان میں گزشتہ روز ایسا ہی واقعہ دیکھنے میں آیا جہاں 20سالہ لڑکی اپنے باپ کے ساتھ مارکیٹ میں شاپنگ کر رہی تھی، اس نے اپنے باپ سے 2000یوآن (تقریباً 33ہزار روپے) کے نئے آئی فون کی فرمائش کی لیکن باپ نے انکار کر دیاجس پر لڑکی نے بچوں کی طرح عین روڈ کے درمیان میں لیٹنا اور رونا شروع کر دیا۔ٹریفک پولیس کے اہلکاروں نے لڑکی کو اس طرح روڈ کے درمیان میں روتے اور لیٹتے دیکھا تو اس کے دونوں اطراف کھڑے ہو گئے تاکہ چلتی ٹریفک میں کوئی گاڑی اسے کچل نہ دے۔ اہلکاروں نے اسے والد کے ساتھ مصالحت پر بھی آمادہ کرنے کی کوشش کی۔ آئی فون والی دکان کا مالک بھی یہ تماشا دیکھ رہا تھا، اس نے آئی فون کی قیمت کم کر دی جس پر لڑکی کے والد نے اسے آئی فون خرید کر دے دیا اور لڑکی خوشی سے پھولے نہ سماتی ہوئی اپنے والد کے ہمراہ گھر روانہ ہو گئی۔

مزید : صفحہ آخر