پنجاب کے وزراء اور سٹاف کا بوگس بلز کی مد میں رقم حاصل کرنے کا انکشاف

پنجاب کے وزراء اور سٹاف کا بوگس بلز کی مد میں رقم حاصل کرنے کا انکشاف

لاہور(محمدنواز سنگرا)پنجاب کے وزراء اور ان کے سٹا ف کے ٹی اے ڈی اے کے بھاری بل،محکمہ اکاؤنٹس بھی سر پکڑ کر بیٹھ گیا۔پنجاب کے صوبائی وزراء اور ان کے ساتھ سٹاف کو خصوصی اسائنمنٹ کی مد میں ٹریولنگ اور ڈیلی الاؤنس دیا جاتا ہے جس میں بعض بلز کے جعلی ہونے کا انکشاف ہوا ہے اس صورتحال کے باعث محکمہ اکاؤنٹس نے بعض ہوٹلوں سے بھی بلز کی تصدیق شروع کر دی ہے کہ آیا وزراء اور ان کے سٹاف کی جانب سے پیش کیے جانے والے رہائش اور کھانے کے بلز اصلی ہیں یا جعلی۔تفصیلات کے مطابق اکاؤنٹس ڈیپارٹمنٹ پنجاب میں صوبائی وزراء اور ان کے سٹاف کی طرف سے پیش کیے جانیوالے ڈی اے ڈی اے کے بھاری بلز نے محکمہ کو مجبور کر دیا ہے کہ وہ بلز کی متعلقہ ہوٹلوں سے تصدیق کریں جس کیلئے محکمہ اکاؤنٹس کے افسران نے متعلقہ ہوٹلوں سے بلز کی تصدیق شروع کر دی ۔ ذرائع نے بتایا ہے کہ صوبائی وزراء کا سٹاف جعلی بل بنا کر اکاؤنٹس ڈیپارٹمنٹ میں پیش کرتا ہے جہاں سے رقم کی منظوری لی جاتی ہے اور اس طرح ٹی اے ڈی اے کی مد میں جعلی بل بنوا کر حکومتی خزانے سے لاکھوں روپے نکلوائے جا رہے ہیں ۔ذرائع نے بتایا کہ ٹی اے ڈی اے کی مد میں صوبائی وزراء کا سٹاف قومی خزانے کو نقصان پہنچا رہا ہے اور بہت سارے کھانے اور رہائش کے جعلی بل پیش کیے جاتے ہیں جس وجہ سے اکاؤنٹس ڈیپارٹمنٹ بھی پریشان ہے لیکن جب ان بلزپر متعلقہ وزیر دستخط کر دیتا ہے تو محکمہ اس کو روک نہیں سکتا۔

مزید : صفحہ آخر