سعودی فرمانروا کا ترک صدر کو فون،داعش کیخلاف کارروائی کی حمایت کااعلان

سعودی فرمانروا کا ترک صدر کو فون،داعش کیخلاف کارروائی کی حمایت کااعلان
سعودی فرمانروا کا ترک صدر کو فون،داعش کیخلاف کارروائی کی حمایت کااعلان

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

ریاض(مانیٹرنگ ڈیسک) عراق اور شام میں سرگرم جنگجو گروپ ’داعش‘کے خلاف ترکی کی تازہ کارروائی پر امریکہ اور یورپی یونین کے بعد سعودی عرب نے بھی کھل کر ترکی کا ساتھ دینے کا اعلان کردیاہے، یہ اعلان خود سعودی فرمانرواشاہ عبداللہ نے کیا اور ترک صدر طیب اردوان سے ٹیلی فونک گفتگومیں کہاکہ شدت پسندوں کیخلاف ترکی کی فوجی کارروائی حق بجانب ہے اور ریاض اس آپریشن میں انقرہ کی بھرپور حمایت کرتا ہے۔

العربیہ کے مطابق شاہ سلمان نے ترک صدر رجب طیب اردوان سے ٹیلی فونک گفتگومیں خطے کی مجموعی صورتحال پر تبادلہ خیال کیا اورداعش کے خلاف جاری آپریشن میں حمایت کا یقین دلایا۔ ترک صدر نے شاہ سلمان کو داعش کیخلاف فوجی کارروائیوں سے متعلق اعتماد میں لیا۔

ترک صدر نے دہشت گردی کے خلاف جنگ کوپوری قوت سے لڑنے کے عزم کا اظہار کیا اور کہا کہ دہشت گردی کے خلاف جنگ کو منطقی انجام تک پہنچایا جائے گا۔سعودی فرمانروا نے حالیہ دنوں میں ترکی میں ہونے والے دہشت گردی کے واقعات کی شدید مذمت کی اور کہا کہ ترک حکومت کو دہشت گردوں کی سرکوبی اور ملک وقوم کے دفاع کا حق حاصل ہے،دہشت گردی کے خلاف لڑائی میں سعودی عرب ترکی کے ساتھ کھڑا ہے۔

مزید : بین الاقوامی