گڑھی شاہو ،11سالہ بچی کا اغوا ،تھانہ کے باہر احتجاج کے بعد مقدمہ درج

گڑھی شاہو ،11سالہ بچی کا اغوا ،تھانہ کے باہر احتجاج کے بعد مقدمہ درج
 گڑھی شاہو ،11سالہ بچی کا اغوا ،تھانہ کے باہر احتجاج کے بعد مقدمہ درج

  

لاہور(وقائع نگار ) گڑھی شاہو سے دو روز قبل اغوا ہونے والی 11 سالہ بچی کے اغوا کا مقدمہ درج کر لیا گیا، بچی کے لواحقین اور اہل علاقہ نے تھانہ گڑھی شاہو کے باہر تاخیر سے مقدمہ درج کرنے پراحتجاج کیا۔ذرائع کے مطابق گڑھی شاہو ریلوے کالونی کے رہائشی محمد حبیب کے مطابق اس کی گیارہ سالہ بیٹی طوبیٰ بدھ کی شام گھر سے سامان لینے کے لیے نکلی مگر واپس نہ آئی۔ ہر جگہ تلاش کرنے کے باجود بچی کا کہیں سے کوئی سراغ نہیں مل سکا۔بچی کے پْراسرار طور پر لاپتہ ہونے کے بعد لواحقین مقدمہ کا اندراج کروانے تھانہ گئے لیکن پولیس کی جانب سے حسب روایت لیت و لعل سے کام لیا جاتا رہا جس پر لواحقین اور اور اہل علاقہ نے تھانہ گڑھی شاہو کے باہر احتجاج اور شدید نعرے بازی کی۔ مظاہرین کا کہنا تھا کہ لاہور میں گزشتہ کئی دنوں سے اغوا کاروں کے گروہ سرگرم ہیں مگر حکومت سمیت تمام سکیورٹی ادارے خاموش تماشائی بنے ہوئے ہیں۔ مظاہرین کا کہنا تھا کہ آئے روز بچے لاپتہ ہونے کی وجہ سے لوگوں میں خوف و ہراس پھیل گیا ہے۔ پولیس کا کہنا ہے کہ بچی کی تلاش کے لیے ناکے لگا دئے گئے ہیں، مقدمہ درج کر کے تفتیش کا آغاز کر دیا گیا ہے ، بچی کو جلد ہی بازیاب کرالیں گے۔

مزید :

علاقائی -