ناروا لوڈ شیڈنگ اور ناجائز جرمانوں کا خاتمہ کرکے صارفین کو ریلیف دیا جائے ،مولانا گوہر شا

ناروا لوڈ شیڈنگ اور ناجائز جرمانوں کا خاتمہ کرکے صارفین کو ریلیف دیا جائے ...

  

ہ

چارسدہ (بیورو رپورٹ) چارسدہ میں ناروا لوڈ شیڈنگ اور ناجائز جرمانوں کا خاتمہ کرکے صارفین کو ریلیف دیا جائے ۔ ٹرانسفارمر کے مرمت کے نام پر عوام سے رقوم بٹورنے کا سلسلہ بند کیا جائے ۔ منظور شدہ فنڈز فوری طورپر ریلیز کیا جائے تاکہ بجلی کے ترقیاتی منصوبوں میں رکاوٹ ختم ہو جائے ۔ ان خیالات کا اظہار ممبر قومی اسمبلی مولانا سید گوہر شاہ نے گزشتہ روز سٹینڈنگ کمیٹی برائے پانی و بجلی کے اجلاس میں خطاب کر تے ہوئے کی ہے ۔ اجلاس میں موجود وفاقی وزیر برائے پانی و بجلی خواجہ محمد آصف سے انہوں نے مطالبہ کیا کہ چارسدہ کے عوام اس وقت ناروا لوڈ شیڈنگ ، اور بلنگ اور ناجائز جر مانوں میں پھنسے ہوئے ہیں جس سے عوام کی زندگی اجیرن ہو گئی ہے ۔ جرمانوں کی معافی کیلئے جو طریقہ کار اختیار کیا جاتا ہے وہ بہت طویل اور عوام کے بس سے باہر ہیں۔ انہوں نے مطالبہ کیا کہ صارفین کو بڑی حد تک ریلیف دیا جائے تاکہ آئے روز احتجاج کا سلسلہ ختم ہو جائے ۔ انہوں نے کہاکہ عرصہ دراز سے واپڈا نے ٹرانسفارمر ز کے مرمت کیلئے عوام سے رقوم بٹورنے کا جو سلسلہ شروع کیا ہے وہ نہایت شرمناک اور قابل مذمت ہے ۔ اگر اس صورتحال کو بہتر نہ کیا گیا تو عوام بجلی کے کنکشن کاٹنے پر مجبور ہونگے ۔ انہوں نے اپنے ترقیاتی فنڈز کے حوالے سے مطالبہ کیا کہ منظور شدہ فنڈز کو فوری طور پر ریلیز کیا جائے تاکہ بجلی کے جاری ترقیاتی منصوبوں میں رکاوٹ ختم ہو سکے اور پی سی ون کے تحت جن علاقوں میں ٹرانسفارمروں کی تنصیب ، پول ، اور ٹرانسمیشن لائنز کی تنصیب رہ گئی ہے وہ جلد از جلد مکمل کیا جائے ۔ انہوں نے واضح کیا کہ عوام کسی بھی احتجاج کے صورت میں ان کے ہمدردیاں عوام اور صارفین کے ساتھ ہونگی ۔ اس لئے واپڈا افسران اپنے رویوں میں تبدیلی لائیں۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -