اپوزیشن نیب قوانین میں ترمیم کیلئے حکومت کا ساتھ دے،ہمایوں اختر

  اپوزیشن نیب قوانین میں ترمیم کیلئے حکومت کا ساتھ دے،ہمایوں اختر

  

لاہور(نمائندہ خصوصی)پاکستان تحریک انصاف کے سینئر مرکزی رہنما و سابق وفاقی وزیر ہمایوں اختر خان نے کہا ہے کہ اپوزیشن جماعتوں کے اپنے اپنے مفادات ہیں اس لئے ان کا ایک نقطے پر متفق ہونا ممکن دکھائی نہیں دیتا،آج اپوزیشن کی سیاست کی یہ حالت ہے کہ مولانا فضل الرحمان پیپلز پارٹی اور مسلم لیگ (ن) کی قیادت کر رہے ہیں،اگر اپوزیشن نیب قانون میں ترامیم کے حوالے سے سنجیدہ ہے تو اسے حکومت کا ساتھ دیناچاہیے۔

ان خیالات کااظہار انہوں نے وسطی پنجاب سے تعلق رکھنے والے اراکین اسمبلی کے وفد سے ملاقات میں گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ ہمایوں اختر خان نے کہا کہ ہمیں خوشی ہے کہ شہباز شریف قرنطینہ سے باہر آ گئے ہیں اور انہوں نے سیاسی سر گرمیاں شروع کردی ہیں۔ہمیں اپوزیشن کی سر گرمیوں پر کوئی اعتراض نہیں لیکن انتشار پھیلانے سے گریز کرنا چاہیے اور مثبت اپوزیشن کا کردار ادا کرنا چاہیے۔ عوام نے تحریک انصاف کی حکومت کو پانچ سال کا مینڈیٹ دیا ہے،اپوزیشن کی ”معصومانہ خواہش“کو پورا کرنے کیلئے قبل از وقت انتخابات نہیں کرائے جاسکتے،اپوزیشن کے وسط مدتی انتخابات کے نعرے سیاسی ہیں۔مسلم لیگ (ن) جو اس وقت قیادت کے بحران میں مبتلا ہے کیا وہ نئے عام انتخابات میں جانے کی متحمل ہو سکتی ہے؟، یہی صورتحال پیپلز پارٹی کی بھی ہے جسے سندھ میں اپنی سیاسی بقاء کا سامنا ہے۔ہمایوں اختر خان نے کہا کہ اپوزیشن سے درخواست ہے کہ ملک میں مایوسی نہ پھیلائے اور ملک کو آگے بڑھنے دے تاکہ جمہوریت کی جڑیں مضبوط ہوں جس سے عوام کے مسائل حل کرنے میں مدد ملے گی۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -