نیب قوانین میں ترمیم کا مقصد کسی کو این آراو دینا نہیں: اسد قیصر

نیب قوانین میں ترمیم کا مقصد کسی کو این آراو دینا نہیں: اسد قیصر

  

مردان (بیورورپورٹ) سپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر نے کہاہے کہ نیب قوانین میں ترامیم کسی کو این آر او دینا نہیں،احتساب کے دعوے پر اب بھی قائم ہیں، پاکستان کا بڑ ا مسئلہ کرپشن ہے،ملک میں آئندہ سال سے یکساں نظام تعلیم رائج کیاجائے گا وہ تعلیمی بورڈ مردان میں ایف اے،ایف ایس سی کے سالانہ نتائج کی تقریب سے خطاب اورمیڈیاسے گفتگو کررہے تھے جہاں وہ مہمان خصوصی تھے تقریب سے بورڈ کے چیئرمین امتیاز ایوب سمیت دیگر نے بھی خطاب کیا اسد قیصر نے کہاکہ این ٹی ایف پاکستان کے لئے ایک گھمبیر مسئلہ ہے حکومت ان مشکل حالات سے ملک کو نکالنے کے لئے قانون سازی کررہی ہے اور نیب سمیت پندرہ قوانین منظوری کے لئے پیش کئے جائیں گے اس کے لئے پارلیمان کی سب سے بڑی کمیٹی تشکیل دی گئی ہے جس میں حکومت اور تمام اپوزیشن جماعتوں کو نمائندگی دی گئی ہے انہوں نے ایک سوال کے جواب میں کہاکہ حکومت نیب چیئرمین کی مدت ملازمت میں توسیع نہیں کرناچاہتی اصل مسودہ کہیں آگے پیچھے ہواتھا اس حوالے سے سپریم کورٹ ہدایات دی چکی ہے جبکہ حکومت نے ایک آرڈیننس بھی لایاتھا ان تمام چیزوں کو دیکھ کر پارلیمانی کمیٹی غور کرے گی اورانہیں امید ہے کہ نتائج حوصلہ افزا ہوں گے تقریب سے خطاب کے دوران سپیکر قومی اسمبلی نے نمایاں پوزیشن ہولڈرز طلباء کو مبارک باددی اورکہاکہ طلباء ہمارا قیمتی سرمایہ ہے اللہ پرایمان اورمحنت پر یقین ہو تو کوئی مرحلہ دشوارنہیں انہوں نے کہاکہ ملک میں آئندہ سال سے یکساں نظام تعلیم رائج کیاجائے گا جس کے لئے ہوم ورک جاری ہے انہوں نے کہاکہ ملک میں مدارس کا اہم کردار ہے اور علماء کرام کی مشاور ت سے اصلاحات نافذ کریں گے اور اس کے لئے علماء کرام کو اعتمادمیں لیاگیاہے اسد قیصر نے کہاکہ کورونا کی وجہ سے ہمیں چیلنجز کا سامناہے تاہم وزیراعظم عمران خان کے سمارٹ لاک ڈاؤن کے فیصلے کے بہتر نتائج سامنے آناشروع ہوگئے ہیں اورتمام دنیا ہماری پالیسی کی معترف ہے انہوں نے کہاکہ وہ خود کورونا سے حال ہی میں صحت یاب ہوچکے ہیں یہ انہتائی تکلیف دہ مرض ہے شہری عید پر ایس او پیز پر عمل کریں اور احتیاطی تدابیر ہر گز نہ چھوڑیں۔اس موقع پر رکن صوبائی اسمبلی اسد قیصر سیکرٹری بورڈ پروفیسر ڈاکٹر طاہرجاوید،اور اے ڈی سی نیک محمد بھی موجود تھے۔

مزید :

صفحہ اول -