”سندھ حکومت نے پورے کراچی کیلئے دودھ پتی کا بندوبست کیا ہے“ رمیز راجہ نے ایسی تصویر شیئر کر دی کہ ہنسی کا طوفان آ گیا، لیکن پھر کچھ ایسا ہو گیا کہ رمیز راجہ کی اپنی ہنسی بھی غائب ہو جائے

”سندھ حکومت نے پورے کراچی کیلئے دودھ پتی کا بندوبست کیا ہے“ رمیز راجہ نے ...
”سندھ حکومت نے پورے کراچی کیلئے دودھ پتی کا بندوبست کیا ہے“ رمیز راجہ نے ایسی تصویر شیئر کر دی کہ ہنسی کا طوفان آ گیا، لیکن پھر کچھ ایسا ہو گیا کہ رمیز راجہ کی اپنی ہنسی بھی غائب ہو جائے

  

کراچی (ڈیلی پاکستان آن لائن) شہر قائد میں حالیہ بارشوں نے حکومتی کارکردگی کا پول کھول دیا ہے اور پورا شہر ہی ایک طرح سے پانی میں ڈوبا ہوا ہے جس کے باعث گلیاں اور سڑکیں نہر کا منظر پیش کر رہی ہیں۔ 

پاکستان کرکٹ ٹیم کے مایہ ناز سابق کھلاڑی اور موجودہ کمنٹیٹر رمیز راجہ نے اس حوالے سے ایک تصویر شیئر کی جس میں ایک جگہ پر بہت زیادہ مقدار میں پانی جمع دکھایا گیا ہے اور اس کیساتھ لکھا ”سندھ حکومت نے پورے کراچی کیلئے دودھ پتی کا بندوبست کیا ہے۔“

ان کی جانب سے شیئر کی جانے والی یہ تصویر دیکھتے ہی دیکھتے وائرل ہو گئی جس پر سندھ حکومت کے کرتا دھرتا بھی میدان میں آ گئے اور ان سے ناصرف جگہ کے بارے میں پوچھا بلکہ یہ بھی بتایا کہ یہ تصویر کراچی کی نہیں بلکہ بھارتی شہر حیدر آباد کی ہے جس کے بعد یقینا رمیز راجہ کی ہنسی غائب ہو گئی ہو گی۔ سینیٹر سعید غنی نے ان کی ٹویٹ پر جواب دیتے ہوئے لکھا ”کیا آپ بتانا پسند فرمائیں گے کہ یہ کراچی کا کون سا علاقہ ہے۔“

نجی خبر رساں ادارے کے صحافی نے لکھا ”یہ دودھ پتی حیدر آباد دکن سے ہے، کراچی سے نہیں“

معاملہ یہیں پر ختم نہیں ہوا بلکہ سینیٹر سعید غنی اور صحافی کی جانب سے ردعمل آنے کے بعد انہوں نے نجی خبر رساں ادارے کی ویڈیو کا ایک لنک بھی شیئر کیا جس میں کراچی کی گلیوں میں بہتا پانی دیکھا جا سکتا ہے اور لکھا ”کراچی میں دودھ کی بہتی نہریں دیکھ لیں۔“

مزید :

کھیل -