امریکہ افغانستان میں کارروائی کیلئے پاکستانی سرزمین استعمال کرنے کا مطالبہ کرے تو کیا کرینگے، صحافی کے سوال پر وزیر اعظم کا ایسا جواب جو آپ کے تمام اندازے غلط کر دے 

امریکہ افغانستان میں کارروائی کیلئے پاکستانی سرزمین استعمال کرنے کا مطالبہ ...
امریکہ افغانستان میں کارروائی کیلئے پاکستانی سرزمین استعمال کرنے کا مطالبہ کرے تو کیا کرینگے، صحافی کے سوال پر وزیر اعظم کا ایسا جواب جو آپ کے تمام اندازے غلط کر دے 

  

اسلام آباد ( ڈیلی پاکستان آن لائن ) وزیر اعظم عمران خان نے پاکستان کی سر زمین کسی بھی ملک کے خلاف استعمال کرنے کی تردید کر دی ، کہا کہ امریکہ 20سال تک افغانستان میں رہ کر کچھ نہیں کر پایا ، یہاں سے کارروائیاں کر کے کیا حاصل کر لے لگا۔

وزیر اعظم نے اسلام آباد میں پاک افغان یوتھ فورم کے وفد سے ملاقات کی ، ملاقات میں وفد کی جانب سے سوالات کئے گئے جن کا وزیر اعظم نے تفصیل سے جواب دیا ، ایک سوال کہ امریکہ افغانستان میں کارروائی کیلئے پاکستانی سر زمین استعمال کرنے کا مطالبہ کرے تو کیا آپ اجازت دیں گے کے جواب میں وزیر اعظم نے کہا کہ پاکستان سے کارروائی کر کے امریکہ کیا حاصل کرے گا، بیس سال افغانستان کے اندر سے کارروائیاں کر کے وہ کچھ حاصل نہیں کر سکا، مجھے اس بات پر اگر کوئی امادہ کر سکتاہے کہ پاکستان سے ہونے والی کارروائی سے کوئی خاص فرق پڑے گا تو ہم اس کی اجازت پر غور کر سکتے ہیں ، لیکن اگر وہ افغانستان میں 20سال سے جاری آپریشن سے کچھ حاصل نہیں کر سکے تو وہ پاکستان سے کارروائی میں کیا حاصل کرنے کی توقع رکھتے ہیں ، اس سے یہ ہوگا کہ پاکستان کو ایک ایسے تنازع میں ملوث کیا جائے جس سے ہمارا کچھ لینا دینا نہیں ، ہم کیوں اپنے آپ کو ایک نئے تنازع میں ملوث کریں ۔

افغانستان کے سفیر کی بیٹی کے اغواءسے متعلق سوال کے جواب میں وزیر اعظم نے کہا کہ سلسلہ کے موقف میں ہم آہنگی نہیں ، سفیر کی بیٹی کے مطابق اسے ٹیکسی میں ڈال کر اغواءکیا گیا اور تشدد کا نشانہ بنایا گیا، جبکہ کیمرے کی فوٹیج کے مطابق وہ ٹیکسی میں خود آرام سے بیٹھی ہیں ، پولیس نے ٹیکسی ڈرائیور کو پکڑ کر تفتیش کی ،تمام ریکارڈ پولیس کے پاس موجود ہے ، سلسلہ اور ان کے والدین بد قسمتی سے واپس چلے گئے ، اب تصدیق کرنے کیلئے ہمارے پاس کوئی راستہ نہیں اور ہمیں تمام سوالوں کے جوابات نہیں ملے ،تفتیش اور افغان سفیر کی بیٹی کے موقف میں تضاد ہے ۔افغان سفیر کی بیٹی کے موقف اور کیمرہ فوٹیج ، ٹیکسی ڈرائیور سے حاصل شدہ معلومات میں ہم آہنگی نہیں ، افغانستان سے ایک ٹیم آرہی ہے ، ہم انہیں تمام معلومات فراہم کریں گے جس میں سیف سٹی کیمرے کی حاصل فوٹیج بھی شامل ہیں تا کہ وہ واپس جا کر افغان سفیر کی بیٹی سے تفتیش کر سکیں۔

مزید :

قومی -