یمن میں ہیضے کی وبا، ہسپتالوں میں ہنگامی حالت نافذ کر دی گئی

یمن میں ہیضے کی وبا، ہسپتالوں میں ہنگامی حالت نافذ کر دی گئی

صنعاء (اے پی پی) یمن میں ہیضے کی وبا ، ہسپتالوں میں ہنگامی حالت نافذ کردی گئی۔عالمی ذرائع ابلاغ کے مطابق یمن میں دو ماہ کے دوران اس مرض کی وبا سے کم از کم 1400 افراد اپنی جانوں سے ہاتھ دھو چکے ہیں جبکہ متاثرہ افراد کی تعداد 2 لاکھ کے قریب ہو چکی ہے۔ہیضے کی وبا تیزی سے پھیلنے کے باعث یمنی وزیر اعظم احمد عبید بن دغر نے ابین، عدن، لحج، الضالع اور شبوہ کے صوبوں میں صحت کے شعبے میں ہنگامی حالت کا اعلان کردیا ہے۔ بن دغر نے مذکورہ صوبوں میں مقامی حکام کو ہائی الرٹ رہنے کی ہدایت کرتے ہوئے کہا ہے کہ ہسپتالوں اور طبی مراکز میں صورت حال پر کڑی نظر رکھی جائے اور لوگوں کو فوری ظبی امداد فراہم کی جائے۔یمنی حکومت کا فیصلہ عالمی ادارہ صحت کے اس اعلان کے باوجود سامنے آیا ہے جس میں کہا گیا کہ مرض کی حالیہ وبا سے اموات کی شرح کم ہو کر نصف تک آ گئی ہے تاہم ادارے نے باور کرایا ہے کہ اس کمی کا یہ مطلب نہیں ہے کہ ہیضے کا خطرہ ختم ہو گیا ہے۔

مزید : عالمی منظر