ڈسکہ،پی ٹی آئی، ن لیگی امیدواروں کی بار بار ٹکٹ تبدیلی سے کارکن کنفیوژ

ڈسکہ،پی ٹی آئی، ن لیگی امیدواروں کی بار بار ٹکٹ تبدیلی سے کارکن کنفیوژ

  



ڈسکہ(نامہ نگار،تحصیل رپورٹر)پی ٹی آئی اور ن لیگ کے امیدواروں کی ٹکٹیں تبدیل ہو نے کی افواہوں سے کارکنان میں پریشانی کی لہر دوڑ گئی۔ بار بار امیدوار تبدیل کر نے سے کارکن اور ووٹر کنفیوژن کا شکار ہورہے ہیں چند روز قبل افواہیں گردش کر رہی تھیں کہ این اے 75کا ٹکٹ پی ٹی آئی کے عثمان خالد اور پی پی 42کا چوہدری صداقت کو مل گیا لیکن چند روز بعد ہی پی ٹی آئی آفیشل پیج پر پی پی42کا ٹکٹ پرانے ورکر چوہدری ضیاء اللہ کھارا کو مل گیان لیگ کی جانب سے این اے 75میں سابق ایم این اے سید افتخار الحسن شاہ اور پی پی42میں میاں ذیشان رفیق کے ناموں کا اعلان کیا گیا لیکن چند لوگوں کی جانب سے پی پی 42میں میاں ذیشان رفیق کی ٹکٹ تبدیل ہو نے کی افواہیں زور و شور سے گردش کر رہی ہیں۔ پی ٹی آئی نے این اے75میں چوہدری اسجد ملہی اور پی پی42میں چوہدری صداقت علی کا باقاعدہ اعلان کردیا گیا جس سے افواہیں دم توڑ گئیں لیکن چوہدری ضیاء اللہ کھارا کی جانب سے ریویو کی درخواست پر ایک بارپھر ڈسکہ کی سیاست میں افواہوں کا بازار گرم ہو گیا ہے پارٹی ورکر اپنے اپنے لیڈر کا نام لکھ پر فیس بک پر پوسٹیں اپ لوڈ کر کے شیئر کر رہے ہیں جبکہ عام ووٹر ان افواہوں کی وجہ سے پریشانی کا شکار ہیں اب یہ اونٹ کس کروٹ بیٹھے گا اس کا فیصلہ تو30جون کو پارٹی نشان الاٹ ہو نے کے بعد ہی ہو گا۔

مزید : صفحہ اول


loading...