فواد چودھری سمیت 3امید وار روں کو الیکشن لرنے کی اجازت ، شاہد خاقان عباسی فیصلہ چیلنج نہ کر سکے

فواد چودھری سمیت 3امید وار روں کو الیکشن لرنے کی اجازت ، شاہد خاقان عباسی ...

  



لاہور(نامہ نگار خصوصی )لاہور ہائیکورٹ کے مسٹر جسٹس مظاہر علی اکبرنقوی اور مسٹر جسٹس سردار احمد نعیم پر مشتمل ڈویژن بنچ نے پاکستان تحریک انصاف کے راہنما فواد چودھری کوان کے آبائی حلقہ این اے 67جہلم سے نااہل قراردینے سے متعلق الیکشن اپیلٹ ٹربیونل کا فیصلہ معطل کرتے ہوئے انہیں الیکشن لڑنے کی اجازت دے دی۔ فاضل بنچ نے اس سلسلے میں دائر فواد چودھری کی رٹ درخواست باقاعدہ سماعت کیلئے منظور کرتے ہوئے الیکشن کمشن اور دوسرے مدعا علیہان کو 3جولائی کیلئے نوٹس بھی جاری کردیئے ہیں۔لاہور ہائی کورٹ کے ایک ڈویژن بنچ کی طر ف سے پی پی 120ٹوبہ ٹیک سنگھ سے سابق گورنر پنجاب چودھری سرور کے بھائی اور پی ٹی آئی کے امیدوارچودھری رمضان پرویز کو بھی الیکشن لڑنے کی اجازت دے دی گئی ہے جبکہ ایک تیسرے کیس میں حلقہ این اے 71گجرات سے پیپلز پارٹی کے امیدوار احسان الحق کو بھی انتخابات میں حصہ لینے کی اجازت دے دی گئی۔فواد چودھری کے کیس میں درخواست گزار کی طرف سے محمد احسن بھون اور اعظم نذیر تارڑ ایڈووکیٹس نے موقف اختیا رکیا کہ ریٹرننگ آفیسر نے درخواست گزار کے کاغذات نامزدگی قانون کے مطابق منظور کئے تھے ۔الیکشن اپیلٹ ٹربیونل نے حقائق کے برعکس انہیں نااہل قراردیا ۔فواد چودھری کی طرف سے موقف اختیار کیا گیا کہ الیکشن ٹربیونل نے کاغذات نامزدگی کے ساتھ لگائی گئی معاون دستاویزات کو نظرانداز کیا اور درخواست گزار کے بیرون ملک دوروں کے اخراجات کی تفصیلات فراہم نہ کرنے اور اثاثہ جات کی تمام تر تفصیلات فراہم نہ کرنے کو جواز بنا کر کاغذات نامزدگی مسترد کردیئے۔وکلاء کی طرف سے موقف اختیار کیا گیا کہ الیکشن اپیلٹ ٹربیونل کی طرف سے درخواست گزار کو نااہل قرارددینے کا کوئی قانونی و آئینی جواز نہیں ہے ۔ڈویژن بنچ کی طرف سے الیکشن لڑنے کی اجازت ملنے کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے فواد چودھری نے کہا کہ یہ پی ٹی آئی اور ان کے حلقہ کے لوگوں کی جیت ہے ۔انہوں نے کہا کہ الیکشن ٹربیونل کا فیصلہ قانون کے برعکس تھا۔فواد چودھری نے اپنی حمایت پر پاکستان بار کونسل ،پنجاب بارکونسل اور لاہور ہائی کورٹ بار کے عہدیداروں کا شکریہ بھی اداکیا۔دریں اثناء ہائی کورٹ نے حلقہ این اے 71 گجرات سے مسلم لیگ (ن) کے امیدوار عابد رضاکے کاغذات نامزدگی منظور ہونے کے خلاف رٹ درخواست پر الیکشن کمیشن پاکستان اورعابد رضا کو 29جولائی کیلئے نوٹس جاری کرتے ہوئے جواب طلب کر لیا۔پی پی 120ٹوبہ ٹیک سنگھ سے تحریک انصاف کے امیدوار چودھری رمضان پرویز کو دوہری شہریت رکھنے کے الزام میں لیکشن اپیلٹ ٹربیونل نے نااہل قراردیا تھا۔ہائی کورٹ کے ڈویژن بنچ نے ان کے خلاف فیصلہ معطل کرتے ہوئے انہیں الیکشن لڑنے کی اجازت دی ہے ۔دوسری جانبسابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کی طرف سے حلقہ این اے 57راولپنڈی سے تاحیات نااہلی کے الیکشن اپیلٹ ٹربیونل کے فیصلہ کے خلاف لاہور ہائی کورٹ میں گزشتہ روز رٹ درخواست دائر نہیں ہوسکی ۔یہ درخواست آج29جون کو دائر ہونے کا امکان ہے ۔ان کی طرف سے خواجہ احمد طارق رحیم ایڈووکیٹ نے رٹ درخواست تیار کرلی ہے جو بوجوہ لاہور ہائی کورٹ میں دائر نہیں کی جاسکی ۔درخواست میں الیکشن اپیلٹ ٹربیونل کی طرف سے شاہد خاقان عباسی کو تاحیات نااہل قرار دیئے جانے کے فیصلے کے قانونی اور آئینی جواز کو چیلنج کیا گیا ہے ۔ آج درخواست دائر ہونے کی صورت میں آج ہی اس کی سماعت ہوگی ۔

فواد چودھری/شاہد خاقان

مزید : کراچی صفحہ اول