چارسدہ میں متحدہ مجلس عمل کے امیدواروں کے ناموں کو حتمی شکل دے دی گئی

چارسدہ میں متحدہ مجلس عمل کے امیدواروں کے ناموں کو حتمی شکل دے دی گئی

  



چارسدہ(بیورو رپورٹ) چارسدہ میں متحدہ مجلس عمل کے امیدواروں کے ناموں کو حتمی شکل دے دی گئی۔ این اے 23 سے جماعت اسلامی کے مرکزی امیر سراج الحق نے جے یو آئی کے ظفر علی خان کے حق میں کاغذات نامزدگی واپس لے لئے۔ اس حوالے سے اتمانزئی میں ریٹائرڈ میجر اکبر جان کے رہائش گا ہ پر پریس کانفرنس کرتے ہوئے متحدہ مجلس عمل کے ضلعی صدر ریاض خان نے کہا کہ ایم ایم اے کے قیام سے سیکولر جماعتوں کے نیندیں حرام ہو گئے ہیں ۔اسلام آباد اسلامی نظام کے نفاذ کے لئے چاہیے۔ختم نبوت کے قانون کے تحفظ کے لئے دینی جماعتوں نے قربانیاں دی ہیں اس لئے ہم نے تمام دینی جماعتوں کو اکھٹا کرکے ایم ایم اے بحال کی جس کے تمام امیدوار ایک جھنڈے کے نیچے اسلامی جذبے کو لیکر انتخابی نشان پر لیکشن لڑینگے ۔اس موقع پر انہوں نے اعلان کیا کہ جماعت اسلامی کے مرکزی امیر سراج الحق قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 23چارسدہ ٹو پر جے یو آئی کے امیدوارظفر علی خان کے حق میں دستبردار ہو گئے ہیں اور انہوں نے اپنے کاغذات نامزدگی واپس لے لئے ہیں جبکہ دیگر امیدواروں میں این اے 24 سے جے یو آئی کے مولانا گوہر شاہ کا ٹکٹ دے دیا گیا۔اسی طرح پی کے 56 کا مفتی گوہر علی، پی 57 سے محمد ریاض خان کو ٹکٹ دیا گیا۔ پی کے 58 کا ٹکٹ احسان اللہ خان اور پی کے 59 کا ٹکٹ عبد الؤف شاکر کو دیا گیا ہے جبکہ پی کے 60 کا ٹکٹ مولانا مثمر شاہ کے حصے میں آیا۔اس موقع پرا ن کا مزید کہنا تھا کہ قومی وطن پارٹی کے ساتھ سیٹ ایڈجسٹ منٹ کا کوئی امکان نہیں جبکہ ایم ایم اے کے اتحاد کے لئے سیاسی پارٹیوں کے مابین رابطوں کا سلسلہ جاری رہتا ہے۔

مزید : کراچی صفحہ اول


loading...