سمارٹ لاک ڈاؤن والے علاقوں کے فیڈرز لوڈمنیجمنٹ سے مستثنی

سمارٹ لاک ڈاؤن والے علاقوں کے فیڈرز لوڈمنیجمنٹ سے مستثنی

  

پشاور(سٹاف رپورٹر)گزشتہ دوسالوں کے دوران پاورڈویژن نے بجلی چوری اورلائن لاسز کو کم کرنے کے لئے پورے پاکستان میں براہ راست اوردوررس اقدامات اٹھائے ہیں جس کے نتیجے میں ہائی لاسز والے فیڈروں پر بھی چوری اورلاسز کی شرح کم ہوگئی ہے،اوراس وجہ سے مجموعی طورپرلوڈشیڈنگ میں بھی نمایا ں کمی واقع ہوگئی ہے،یہاں پر یہ امربھی نہایت اہمیت کا حامل ہے کہ دوسال قبل پاکستان کا ٹرانسمشن سسٹم 18000 میگاواٹ سے زیادہ بجلی ترسیل کرنے کے قابل نہیں تھا جبکہ اب وفاقی حکومت کے مربوط نظام کے تحت ٹرانسمشن سسٹم کی استعداد کو تقریبا 26000 میگا واٹ تک بڑھا دیا گیا ہے اور اس وقت ٹرانسمشن سسٹم سے اوسطا 22000 میگاواٹ سے زائد لوڈکی ترسیل کامیابی کے ساتھ جاری ہے،حالیہ کرونا وبا کی صورتحال کے پیش نظر تمام ڈسٹری بیوشن کمپنیز کو ہدایات جاری کی گئیں ہیں کہ کرونا سے متعلق سمارٹ لاک ڈاؤن والے تمام علاقوں میں کسی قسم کی لوڈشیڈنگ نہیں کی جائے گی،خواہ ان علاقوں میں ہائی لاسز فیڈرز کی تعداد ایک یا ایک سے زیادہ بھی ہو،وزارت توانائی کی طرف سے موجودہ حالات میں یہ قدم عوام کو خصوصی ریلیف دینے کے لئے کیا گیا ہے اوراس سلسلے میں تمام ڈسٹری بیوشن کمپنیز کے کنٹرول رومز کے ساتھ ساتھ وفاقی حکومت کا مرکزی کنٹرول سنٹر بھی مسلسل مانیٹرنگ کررہا ہے اورشکایات کے فوری ازالے کو یقینی بنارہا ہے،

مزید :

پشاورصفحہ آخر -