اہلیہ پرتشدد،زریاب ساجد نفسیاتی مریض، سسر سلطان خا ن بلوچ کی میڈیا سے گفتگو، اسسٹنٹ کمشنر جتوئی کاموقف دینے سے انکار

  اہلیہ پرتشدد،زریاب ساجد نفسیاتی مریض، سسر سلطان خا ن بلوچ کی میڈیا سے ...

  

چوک پرمٹ (نمائندہ پاکستان) اسسٹنٹ کمشنر جتوئی زریاب ساجد کے سسر احمد سلطان خان بلوچ سکنہ ضلع جھنگ نے جتوئی میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ 5 جنوری 2020 کو میری بیٹی کومل خان اور زریاب ساجد(بقیہ نمبر14صفحہ6پر)

اسسٹنٹ کمشنر جتوئی کی شادی ہوئی مگر کچھ ہی عرصہ بعد موصوف نے میری بیٹی پر تشدد کرنا شروع کر دیا اور آئے روز جھگڑے کرنا معمول بنا لیا پہلے بھی ہم کئی مرتبہ اس کو گھر کا معاملہ سمجھ کر درگزر کر چکے ہیں اور گھر کی بات باہر نہ نکلنے کے ڈر سے صلح کر لی مگر گزشتہ دو تین دن سے ہماری بیٹی کا ہم سے رابطہ نہیں ہو رہا تھا اورگزشتہ روزہمیں موبائل پر میسج ملا کہ زریاب ساجد اسسٹنٹ کمشنر جتوئی نے ہماری بیٹی کو تشدد کا نشانہ بنایا ہے جس پر ہم جھنگ سے بیٹی کو لینے جتوئی آئے فون پر رابطہ کیا تو موصوف نے بدتمیزی کی انہوں نے الزام عائد کیا کہ زریاب ساجد نفسیاتی مریض ہے موقف کیلئے رابطہ کرنے پر اسسٹنٹ کمشنر جتوئی زریاب ساجد نے کہا کہ یہ ہماری فیملی میٹر ہے میں کوئی موقف نہیں دو نگا ذرائع نے بتایا کہ اسسٹنٹ کمشنر جتوئی پہلے شادی شدہ تھے جسکا انکی اہلیہ کو علم نہ تھا اور شک ہونے پر تو تکرار ہوئی اور زریاب ساجد نے اپنی اہلیہ کو تشدد کا نشانہ بنایا۔

انکار

مزید :

ملتان صفحہ آخر -