سٹاک ایکسچینج واقعہ ، کیا یہ کوئی دہشتگردی کا واقعہ ہے یا پھر ڈکیتی کی کوشش؟ نجی ٹی وی چینل نے اہم نقطہ واضح کردیا

سٹاک ایکسچینج واقعہ ، کیا یہ کوئی دہشتگردی کا واقعہ ہے یا پھر ڈکیتی کی کوشش؟ ...
سٹاک ایکسچینج واقعہ ، کیا یہ کوئی دہشتگردی کا واقعہ ہے یا پھر ڈکیتی کی کوشش؟ نجی ٹی وی چینل نے اہم نقطہ واضح کردیا

  

کراچی (ڈیلی پاکستان آن لائن)پاکستان سٹاک ایکس چینج کی حدود میں فائرنگ سے پانچ افراد مارے گئے ہیں اور حملے کی کوشش ناکام بنادی گئی  ہے ، نجی ٹی وی چینل کے مطابق یہ دہشتگردی کا واقعہ ہوسکتا ہے ، لوٹنے کی کوشش کرنیوالے لوگ اس طرح دستی بموں اور اس قدر بھاری اسلحہ کیساتھ نہیں آتے، ان کا ہدف صرف لوٹ مارہوتاہے اور وہ اپنے ساتھ اتناہی اسلحہ رکھتے ہیں جو ان کو لوٹنے میں مدد دیتا ہے ۔ 

اے آروائے نیوز کے مطابق  بظاہر دو دہشتگردوں نے حملہ کیا، مارے گئے ایک شخص کے ہاتھ میں دستی بم موجود ہے ، دستی بم حملے کے بعد وہ سٹاک ایکس چینج کے اندر داخل ہو ئے ،واقعہ کی اطلا ع ملتے ہی قانون نافذ کرنے والے اداروں جائے وقوعہ پر پہنچ گئے اور علاقے کو گھیرے میں لے لیا۔

تازہ ترین اطلاعات کے مطابق اب ریسکیو کے کچھ اہلکاروں کو بھی اندر داخل ہونے کی اجازت دیدی گئی ، اس سے ایسا محسوس ہوتا ہے کہ اندر آپریشن مکمل ہوچکا ہے اور اب سرچنگ کا عمل جاری ہے ۔ دوسری طرف آئی جی نے ریڈزون میں ہونیوالے واقعے کا نوٹس لیتے ہوئے متعلقہ ڈی آئی جی سے رپورٹ طلب کرلی ۔ 

ادھر جیو نیوز نے بتایا کہ تین دہشتگرد مارے گئے ہیں، پورا علاقہ بند کردیا گیا جبکہ اردگرد کی عمارتوں پر بھی سنائپرز تعینات کردیئے ہیں ۔

مزید :

قومی -