امیر ترین بھارتیوں میں سے ایک، متعدد سٹیل ملوں کے مالک لکشمی مِتل کا بھائی دیوالیہ ہوگیا

امیر ترین بھارتیوں میں سے ایک، متعدد سٹیل ملوں کے مالک لکشمی مِتل کا بھائی ...
امیر ترین بھارتیوں میں سے ایک، متعدد سٹیل ملوں کے مالک لکشمی مِتل کا بھائی دیوالیہ ہوگیا

  

نئی دہلی(مانیٹرنگ ڈیسک) اپنی بیٹی کی شادی پر 5کروڑ پاﺅنڈ (تقریباً 1ارب روپے )اڑاڈالنے والے بھارتی صنعتکار پرمود متل دیوالیہ ہو گئے۔ میل آن لائن کے مطابق 64سالہ پرمود متل 70سالہ لکشمی متل کے بھائی ہیں جن کی دولت 6.78ارب پاﺅنڈ سے زائد ہے اور وہ دنیا کی سب سے بڑی سٹیل کمپنی ’آرسیلر متل‘ کے مالک ہیں۔ پرمود متل بھی اتنے ہی امیر تھے لیکن اب ان کا دیوالیہ نکل چکا ہے۔

پرمود متل کے دیوالیہ ہونے کی وجہ ان کا بوسنیا کی ایک کمپنی کا ضامن بننا ٹھہرا۔سٹیل کی پیداوار میں استعمال ہونے والا ’کوک‘ پیدا کرنے والی اس کمپنی کا نام ’گلوبل اسپیٹ کوکسنا انڈسٹریجا لوکاویک‘ ہے جس پر بھاری قرضہ تھا۔ 2006ءمیں پرمود متل اس کے قرض کے ضامن بن گئے لیکن بعد میں انکشاف ہوا کہ یہ کمپنی منظم جرائم میں ملوث رہ چکی ہے۔ اس پر گزشتہ سال جولائی میں پرمود متل کو بھی بوسنیا میں گرفتار کر لیا گیاتھا۔پرمود متل اسپیٹ انڈسٹریز لمیٹڈ کے چیئرمین بھی تھے۔

رپورٹ کے مطابق پرمود متل کی بیٹی کی شادی 2013ءمیں بارسیلونا میں ہوئی تھی جس پر انہوں نے اس قدر پیسہ لگایا کہ عالمی میڈیا کی شہ سرخیوں کی زینت بن گئے۔ اس شادی پر 132پاﺅنڈ کا کیک مہمانوں کو کھلایا گیا تھا۔ اب پرمود متل 13کروڑ پاﺅنڈ کے مقروض ہو کر دیوالیہ ہوچکے ہیں۔ دوسری طرف ان کے بڑے بھائی لکشمی متل اس وقت بھی برطانیہ کے 19ویں امیر ترین آدمی ہیں اور وہ اپنے بھائی کو ضمانت پر رہا کروانے کو بھی تیار نہیں ہیں۔ اس کی وجہ دونوں بھائی کی اپنے والد کے کاروبار کی تقسیم پر ہونے والی لڑائی ہے جس کی وجہ سے دونوں تاحال ایک دوسرے سے دور ہیں۔

مزید :

بین الاقوامی -