پریشانیوں میں مبتلاافراد نیکیوں میں مصروف ہوجائیں، مولانا اطہر عطاری 

پریشانیوں میں مبتلاافراد نیکیوں میں مصروف ہوجائیں، مولانا اطہر عطاری 

  

لاہور(سٹی رپورٹر) دعوت اسلامی کی مرکزی مجلس شوریٰ کے رکن مولانا محمد اطہر عطاری نے کہا ہے کہ معاشرے کے افراد کسی نہ کسی پریشانی کا شکار ہیں،کوئی بیروز گار ہے تو کوئی تنگدست ہے،پریشانی کی وجہ سے ٹینشن بڑھتا ہے پھرٹینشن کا تسلسل ڈپریشن میں تبدیل ہوجاتا ہے،ذہنی تناؤ، دماغی کمزوری اور طرح طرح کی بیماریاں انسان پر غالب ہونا شروع ہوجاتی ہیں، الغرض ہر شخص کو کوئی نہ کوئی پریشانی گھیرے ہوئے ہے،بہت بڑی تعداد اللہ تعالیٰ کی ذات پر بھروسہ کرنے کی بجائے خود کو ناامیدی کی گھاٹی میں گرادیتے ہیں،اسی وجہ سے آج حالات خراب ہورہے ہیں۔ ان خیالات کااظہار انہوں نے فیض مدینہ مسجد میں سنتوں بھرے اجتماع سے بیان کرتے ہوئے کیا۔رکن شوریٰ نے کہا کہ ہم تکلیف،پریشانی اور آزمائش سے نکلنے کی بجائے اپنے ذہن کو مفلوج کرکے اس کی وادی میں ڈوب جاتے ہیں کہ اب کیا ہوگا یہ لفظ اس وقت سننے کو ملتا ہے جب پریشانی آتی ہے،پھر گھبراہٹ شروع ہوجاتی ہے لہذا جب بھی پریشانی آئے تو اللہ کی ذات بابرکت پر بھروسہ کرتے ہوئے آزمائش کیلئے خود کو تیار کرنا شروع کردیں۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -