پی پی 38 ضمنی الیکشن میں شفافیت کو یقینی بنایاجائیگا، چیف الیکشن کمشنر

پی پی 38 ضمنی الیکشن میں شفافیت کو یقینی بنایاجائیگا، چیف الیکشن کمشنر

  

 لاہور(سپیشل رپورٹر)چیف الیکشن کمشنر آف پاکستان سکندر سلطان نے دفتر صوبائی الیکشن کمشنر پنجاب، لاہور میں 28جولائی کو منعقد ہونے والے ضمنی انتخاب، PP-38سیالکوٹ کی تیاریوں کا جائزہ لینے کیلئے اہم اجلاس کی صدارت کی اجلاس میں جوائنٹ صوبائی الیکشن کمشنر پنجاب، سعید گل، ڈسٹرکٹ ریٹرننگ آفیسرنذر عباس، ریٹرننگ آفیسرابرار احمد جتوئی، ڈسٹرکٹ مانیٹرنگ آفیسر اشتیا ق احمد اور دفتر صوبائی الیکشن کمشنر پنجاب کے دیگر افسران نے بھی شرکت کی۔ڈ سٹرکٹ ریٹرننگ آفیسرنذر عباس نے الیکشن کے انعقاد کے حوالے سے مختلف امور پر بریفنگ دی جن میں سکیورٹی پلان، لاجسٹک، انتظامی پلان اور ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی پر لئے گئے ایکشن کی تفصیلات شامل تھیں  چیف الیکشن کمشنرسکندر سلطان نے متعلقہ افسران سے خطاب کرتے ہوئے اہم ہدایات دیں انہوں نے کہا کہ حلقے میں ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی کو کسی طور بھی نظرا نداز نہ کیا جائے اور انتخابی قوانین کے مطابق اقدامات اٹھائے جائیں  انہوں نے مزید کہا کہ تمام ایسے عناصر جو کہ NA-75 ڈسکہ کے ضمنی انتخاب 19فروری 2021 میں بد انتظامی میں ملوث رہے، انہیں PP-38 کے حدود سے دور کر دیا جائے انہوں نے ہدایات دیں کہ حلقہ میں ترقیاتی کاموں اور سرکاری محکموں میں تقرری و تبادلے کے حوالے سے کوئی رعایت نہیں برتی جائے گی چیف الیکشن کمشنر سکندر سلطان نے یہ اہم پیغام دیاکہ الیکشن کے عمل کی شفافیت کو قائم رکھنے کیلئے کو ئی سمجھوتا نہیں کیا جائے گا اور انتخابات غیر جانبدارانہ ہونگے انہوں نے آگاہ کیا کہ انتخابی عمل میں شامل کوئی بھی افسر اگر جانبداری کا مظاہرہ کریگا تو الیکشن کمیشن کی جانب سے اسے سخت سے سخت سزا دی جائے گی جس میں نوکری سے بر طرف کرنا بھی شامل ہے  انہوں نے مزید کہا کہ PP-38، سیالکوٹ کے ضمنی انتخاب میں بھی ڈ سکہ ری پول اور خوشاب کے ضمنی انتخاب کی طرح شفافیت کو یقینی بنایا جائے گا اور کسی قسم کے اندرونی و بیرونی دباؤ کو ملحوظ خاطر نہیں لایا جائے گا۔ 

چیف الیکشن کمشنر

مزید :

صفحہ آخر -