سوتن قتل کیس، ڈیڑھ ماہ سے ملزم آزاد،  متاثرین کا احتجاج، نعرے بازی

سوتن قتل کیس، ڈیڑھ ماہ سے ملزم آزاد،  متاثرین کا احتجاج، نعرے بازی

  

 بہاولپور(ڈسٹرکٹ رپورٹر) ہارون آبادکی رہائشی تین بچوں کی ماں (بقیہ نمبر14صفحہ6پر)

رضیہ بی بی کاخاوند فوت ہونے کے بعداس نے اپنے خاوندکے بھائی محمدحسین کیساتھ نکاح کرلیا تھااس رنجش پرمبینہ طورپرمحمدحسین کی پہلی بیوی منوربی بی نے اپنے بھائیوں عالم شیر، خالق علی، ارشاد بھٹی اورشازیہ بی بی کیساتھ مل کر ایک منصوبہ بندی کے تحت تقریباڈیڑھ ماہ قبل26 ویں رمضان المبارک کورات کے وقت حملہ کرکے رضیہ بی بی کوقتل کردیاتھاایس ایچ اوتھانہ صدرہارون آباد بشیراحمداورتفتیشی پولیس آفیسر محمدناظم نے ملزمان کیخلاف مقدمہ درج کرنے کے بعدانہیں گرفتار کرنے سے انکارکردیا متاثرہ خاندان نے درجنوں افراد کے ہمراہ ڈی پی اوچوک بلاک کرکے بھرپوراحتجاجی مظاہرہ کیا ملزمان کی گرفتاری اورمقامی پولیس کیخلاف کاروائی کامطالبہ کیاتوایس ایچ اوتھانہ سول لائن مہرعبدالجبار نے متاثرین کی دادرسی کرانے کی بجائے انہیں سنگین نتائج کی دھمکیاں دیناشروع کردیں جس سے دلبرداشتہ ہوکر احتجاج کرنیوالی خواتین اسلامیہ یونیورسٹی کی بس کے سامنے لیٹ گئیں انہوں نے کہاکہ ان کاایک قتل پہلے ہوچکاہے اگرمزید بھی ایک دولوگ مرجائیں گے توکوئی فرق نہیں پڑے گاہم انصاف لے کرجائیں گے۔ مظاہرین نے وزیراعلی پنجاب، آئی جی پنجاب اور آر پی اوبہاولپور سے سخت نوٹس لینے کامطالبہ کیاہے۔

نعرے بازی

مزید :

ملتان صفحہ آخر -