سکاٹ لینڈ کی سب سے بڑی مسجد کے پاکستانی امام کے واٹس ایپ پر ممتاز قادری کے حق میں پیغامات، لیکن جب برطانوی میڈیا ’خبر‘ لینے پہنچا تو کیا جواب دیا؟ جان کر آپ کو بھی بے حد حیرت ہوگی

سکاٹ لینڈ کی سب سے بڑی مسجد کے پاکستانی امام کے واٹس ایپ پر ممتاز قادری کے حق ...
سکاٹ لینڈ کی سب سے بڑی مسجد کے پاکستانی امام کے واٹس ایپ پر ممتاز قادری کے حق میں پیغامات، لیکن جب برطانوی میڈیا ’خبر‘ لینے پہنچا تو کیا جواب دیا؟ جان کر آپ کو بھی بے حد حیرت ہوگی

  

ایڈنبرا(مانیٹرنگ ڈیسک) ممتاز قادری کے معاملے پر متضاد خیالات اور آراءکا اظہار جاری ہے۔ سکاٹ لینڈ کی سب سے بڑی مسجد کے امام نے بھی اس موضوع پر کچھ اظہار خیال کیا، لیکن جب میڈیا نے ان سے وضاحت چاہی تو جواب خاصا غیر متوقع تھا۔برطانوی نشریاتی ادارے کی رپورٹ کے مطابق مولانا حبیب الرحمان گلاسگو کی مرکزی مسجد کے امام ہیں اور انہوں نے گزشتہ دنوں چیٹنگ ایپلی کیشن واٹس ایپ پر ایک گروپ میں ممتاز قادری کی پھانسی کے متعلق پیغامات پوسٹ کیے۔ انہوں نے اپنے پہلے پیغام میں کہا کہ ”میں ممتاز قادری کی پھانسی پر بہت پریشان اور بے قرار ہوں۔“ دوسرے پیغام میں انہوں نے لکھا کہ ”آج میں اپنی تکلیف نہیں چھپا سکتا۔پوری قوم اجتماعی طور پر جو کام کرنا چاہتی تھی لیکن نہ کر سکی، وہ ممتاز قادری نے کر دیا، جس کی اب انہیں سزا دے دی گئی ہے۔“

جب برطانوی نشریاتی ادارے نے ان پیغامات پر موقف جاننے کے لیے مولانا حبیب الرحمان سے رابطہ کیا تو ان کے غیر متوقع جواب نے میڈیا کو بھی حیران کر دیا۔ ان کا کہنا تھا کہ ان کے بیان کو تناظر سے ہٹ کر دیکھا جا رہا ہے، وہ تو دراصل پھانسی کی سزا کے خلاف اپنی رائے کا اظہار کر رہے تھے۔

دوسری طرف ایک وکیل عامر انور نے مولانا حبیب الرحمان کے ان پیغامات پر مرکزی مسجد گلاسگو میں اصلاحات کا مطالبہ کر دیا ہے۔ برطانوی نشریاتی ادارے سے گفتگو کرتے ہوئے عامر انور کا کہنا تھا کہ ” اس وقت گلاسگو کی مسلمان کمیونٹی میں یہ تحفظات پائے جارہے ہیںکہ جب امام صاحب اس طرح کے خیالات کا اظہار کر رہے ہیں تو وہ ہمارے بچوں کو کیا سکھا رہے ہوں گے۔“

مزید :

بین الاقوامی -