یوحنا آباد ،سانحہ گلشن اقبال میں جاں بحق تین افراد کی آخری رسومات ادا

یوحنا آباد ،سانحہ گلشن اقبال میں جاں بحق تین افراد کی آخری رسومات ادا
 یوحنا آباد ،سانحہ گلشن اقبال میں جاں بحق تین افراد کی آخری رسومات ادا

  

لا ہور (اپنے کرا ئم ر پو رٹر سے )سانحہ گلشن اقبال میں جا ں بحق ہو نے والے یو حنا آ با د کے ر ہا ئشی تین افرا د کی کی نعشیں پو لیس نے ضروری کا رروا ئی کے بعد ور ثا کے حوالے کردیں جنہیں آ خری رسوما ت کے بعد مقامی قبرستا ن میں سپرد خا ک کردیا گیا ۔ تفصیلا ت کے مطا بق یو حنا آ با جی بلا ک کے ر ہا ئشی 18سا لہ آ صف ،20سا لہ یشرو ن پطر س ،25سا لہ مطا ھر جا وید مسیح کی نعشیں پو لیس نے ضروری کا رروا ئی کے بعد ور ثاکے حوالے کردیں ، نعشیں گھر پہنچنے ہر کہرا م بر پا ہو گیا۔ اس موقع پر ہر آنکھ اشک با ر تھی والد ین پر غشی کے دورے۔ بعدزا ں جا ں بحق ہونے والے نوجوانو ں کو آ خر ی ر سوما ت کے بعد مقامی قبرستا ن میں سپرد خا ک کردیا گیا ۔ جاں بحق ہو نے والوں کے ور ثا نے نما ئند ہ پا کستا ن کو بتا یا کے ان کی د نیا اجڑ گئی یشرون کے والد مختا ر کا کہنا تھا کہ جب ان کو اطلا ع ملی کے گلشن اقبا ل میں د ھماکہ ہو اہے تو فور ی گلشن پا ر ک پہنچنے لیکن ان کے بیٹے کا کو ئی پتہ نہیں چلا جس کے بعد جنا ح ہسپتا ل پہنچنے تو بیٹے کی نعش مردہ خا نہ کے با ہر سٹیچرپر پڑی تھی ۔ 25سا لہ مطا ھر کے والد جاوید مسیح کا کہنا تھا کہ بیٹے کو منع کیا تھا کہ پا ر ک میں نہ جا ؤ حالا ت بہتر نہیں ہیں لیکن مطا ھر اپنے دو ستو ں کے ہمرا ہ تفر یح کے لئے گیا تھا جو مو ت کی واد ی میں چلا گیا ۔ خدا وند کر یم ان ملک د شمن د ہشت گردو ں کو تبا ہ وبر با د کریں۔ 20سا لہ آصف کے ور ثا کا کہنا تھا کہ آصف ایف اے کا طالبعلم تھا اور محنتی بچہ تھا جو اپنی کلا س میں اول پو زیشن لیتا تھا ۔ آصف گلشن اقبا ل میں اپنے کزنو ں کے ساتھ گیا تھا جبکہ اسکا کزن عرفا ن زخمی ہے جبکہ آصف جا ں بحق ہو گیا ۔ حکومت پنجا ب سے اپیل ہے کہ امد اد نہیں چا ہیے بلکہ ان کے بچو ں کے قاتلو ں کوپکڑ کر قرا ر واقعی سزا د لو ائی جا ئے ۔ واضح ر ہے گلشن اقبا ل دھماکے میں 72 افرادجا ں بحق ہو ئے تھے ۔ ہسپتا ل ذرائع کیمطابق50 میتیں شناخت کے بعدورثاکے حوالے کر دی گئیں۔جناح ہسپتا ل میں 122 زخمی زیر علاج ہیں۔18کی حالت تشویش ناک ہے۔

مزید :

علاقائی -