اقبال پارک سول ڈیفنس ،صحت ،بم ڈسپوزل سکواڈ کا عملہ دن رات امدادی سرگرمیوں میں مصروف رہا

اقبال پارک سول ڈیفنس ،صحت ،بم ڈسپوزل سکواڈ کا عملہ دن رات امدادی سرگرمیوں ...

  

لاہور (اپنے نمائندے سے)گلشن اقبال پارک میں ہونے والے خود کش حملہ کے بعد ضلی انتظامیہ کے تمام ادارے بشمول سول ڈیفنس،صحت،بم ڈسپوزل سکواڈ،ٹاؤن عملہ امدادی سرگرمیوں دن رات مصروف عمل رہے، ڈی سی آفس میں لواحقین کی آسانی کے لئے کنٹرول روم قائم کر دیا گیا ہے جہاں 24گھنٹے جا ں بحق اور زخمی افراد کے لواحقین کو معلومات بہم پہنچائی جارہی ہیں ،صوبہ بلوچستان ،آزاد کشمیر اور صوبہ سندھ سے تعلق رکھنے والے جابحق افراد کی میتیں ان کے آبائی شہروں میں روانہ کر دی گئیں ،ڈی سی اولاہور کیپٹن(ر) محمد عثمان،ڈی او سول ڈیفنس صداقت علی ملک، ڈپٹی ڈسٹرکٹ آفیسر سول ڈیفنس قاری عالم شیر کے علاوہ سینکڑوں رضا کار،تما م ٹاؤنز کے ڈپٹی ڈسٹرکٹ آفیسر اور ریسکیواہلکار گلشن اقبال پارک میں بم دھماکہ کی اطلاع ملتے ہی فوری طو رپر جائے حادثہ پر پہنچے اور تمام تر امدادی کارروائیوں کی خود نگرانی کر تے رہے۔ ڈی سی لاہور نے ضلعی انتظامیہ کے افسران جناح، سروسز، جنرل اور دیگر ہسپتالوں کا دورہ بھی کیا اور زخمیوں کی طبی امداد کے لیے کیے جانے والے انتظامات کا جائزہ لیا۔ علاوہ ازیں ضلعی انتظامیہ لاہور نے جاں بحق ہونے والے افراد کی نعشوں کو ان کے گھروں، شہروں میں منتقل کرنے کے لیے مناسب بندوبست کیا اور قصور، شیخوپورہ ، اوکاڑہ، حافظ آباد، ساہیوال سے تعلق رکھنے والے جاں بحق افراد کی میتوں کو ایمبولینسز کے ذریعے ان کے آبائی شہروں کو روانہ کیا گیا۔ اس کے علاوہ صوبہ بلوچستان میں 3، آزاد جموں و کشمیر میں1 اور سندھ میں7میتوں کو ایمبولینسز کے ذریعے روانہ کیا گیا۔ضلعی انتظامیہ لاہور نے بم دھماکہ کے فوری بعد لواحقین کی آسانی کے لیے سروسز، جنرل، جناح، باجوہ، عمر، میو اور دیگر ہسپتالوں میں معلوماتی ڈیسک قائم کردیئے اور ڈی سی او آفس لاہور میں کنٹرول روم قائم کر دیا جس کا نمبر042-99210630ہے۔زخمیوں کو بہتر طبی سہولیات فراہم کرنے کے لیے اور جاں بحق افراد کی میتوں کو ڈیڈ ہاؤس منتقل کرنے کے لیے تمام ٹاؤنز کے ڈپٹی ڈسٹرکٹ آفیسرز ہیلتھ کے علاوہ ٹاؤن کے عملہ، سول ڈیفنس اور ریسکیو اہلکاروں کی ہسپتالوں میں ڈیوٹیاں لگائی گئی ۔جنہوں نے تمام تر ضروری اقدامات کیے اور اس اَمر کو یقینی بنایا کہ زخمیوں اور جاں بحق افراد کے لواحقین کو کسی بھی قسم کی دشواری کا سامنا نہ کرنا پڑے۔ ڈی سی اولاہور کیپٹن(ر) محمد عثمان نے ای ڈی اوہیلتھ، ڈی او سول ڈیفنس صداقت ملک ،ڈپٹی ڈسٹرکٹ آفیسر قاری عالم شیر اور ٹاؤن کے عملہ کو جنازوں اور تدفین کے حوالے سے تمام تر ضروری اقدامات کرنے کی بھی ہدایت کی۔ضلعی انتظامیہ لاہور کی جانب سے زخمیوں اور ان کے لواحقین کو ہسپتالوں میں صبح کا ناشتہ اور دوپہر کا کھانا بھی تقسیم کیا گیا ،پھولوں کے گلدستے بھی پیش کیے گئے اور ان کی تیمار داری بھی کی گئی۔اسطرح ضلعی انتظامیہ لاہور نے گلشن اقبال پارک دھماکے کے حوالے سے جناح ہسپتال میں امدادی کیمپ بھی قائم کر دیا ہے جہاں پر ضلعی انتظامیہ کے ملازمین بھی موجود ہیں۔آج دن بھر میں355زخمیوں میں سے205زخمیوں کو ہسپتالوں میں طبی امداد دینے کے بعد ڈسچارج کر دیا گیا جبکہ باقی142زخمی افراد کو ہسپتالوں میں طبی سہولیات فراہم کی جارہی ہیں اور ٹاؤن اور محکمہ صحت کا عملہ ان کے ساتھ مکمل تعاون کو یقینی بنا رہا ہے۔ ضلعی انتظامیہ لاہور کے افسران و ملازمین نے ڈیڈ ہاؤس میں نعشوں کو تمام تر ضروری اقدامات کے بعد ورثاء کے حوالے کیا۔

مزید :

علاقائی -