خانیوال ‘ وہاڑی کے 2نوجوان سانحہ لاہور کی نذر ‘ میتیں گھر پہنچنے پر کہرام

خانیوال ‘ وہاڑی کے 2نوجوان سانحہ لاہور کی نذر ‘ میتیں گھر پہنچنے پر کہرام

خانیوال ‘ وہاڑی ‘ لڈن ( نمائندگان ) سانحہ لاہور میں خانیوال اور وہاڑی کے نواحی علاقوں کے 2نوجوان چل بسے میتیںٰ گھر پہنچنے پر کہرام مچ گیا نمازجنازہ کے بعد سپرد خاک کردیا گیا تفصیل کے مطابق خانیوال سے ڈسٹرکٹ رپورٹر ، نمائندہ خصوصی ، نمائندہ پاکستان کے مطابق نواحی علاقے چک نمبر169/10Rکا 22سالہ محمد کاشف ولد نذیر لاہور میں مزدوری کرتا تھا عرصہ دو ماہ قبل یہ مزدوری کرنے کے لیے لاہور گیا تھا اتوار والے دن چھٹی ہونے کے باعث یہ سیروتفریح کے لیے گلشن اقبال پارک میں گیا اور وہاں پر ہونے والے خود کش دھماکے میں موقع پر ہی جا بحق ہو گیا محمد کاشف کی نعش کو پولیس نے ان کے آبائی گاؤں چک نمبر169/10Rمیں پہنچایا نعش پہنچتے ہی گھر میں کہرام مچ گیا والدین پر غشی کے دورے علاقے کی ہر آنکھ اشکبار ہو گئی محمد کاشف تین بھائیوں اور دو بہنوں میں سب سے چھوٹا تھا نماز جنازہ ادا کرنے کے بعدمتوفی کو آبائی قبرستان میںآہوں اور سسکیوں کے ساتھ سپرد خاک کر دیا گیا ۔وہاڑی ‘ لڈن سے بیورو رپورٹ ، نامہ نگار کے مطابق نواحی قصبہ لڈن کے محلہ پل بنجر کے غریب محنت کش صابر حسین سہوکا 26سالہ بیٹا طارق حسین ٹھوکر نیاز بیگ لا ہور میں ایک کپڑے کی کڑھائی کی فیکٹری میں ملا زمت کر تا تھا اور اتوار چھٹی ہونے کی وجہ سے دوستوں کے ساتھ گلشن اقبال فیملی پارک میں سیر کرنے کے لیے گیا تو مبینہ خود کش دھماکا میں جا ں بحق ہو گیا جس کی میت انکے آبائی گاؤں لائی گئی اور مقامی قبرستان میں نمازجنازہ ادا کی گئی جس میں ایم این اے طا ہر اقبال چودھری ، ایم این اے ساجد سلیم شاہ ، ڈی او سی مہر امیر بخش ،لیگی رہنما میاں محمد آصف خورشید ، چیئرمین محمد صفدر گجر ، نائب تحصیلدار حافظ اقبال محمود کاٹھیا ، چیئرمین قاضی حمید الحسن ، سابق نائب ناظم محمد عارف وڑائچ ، ظفر شاہ ، حبیب احمدسمیت تاجروں ، شہریوں سیاسی وسماجی رہنماؤں کی کثیر تعداد نے شر کت کی۔

مزید : کراچی صفحہ اول