جرمنی کیخلاف ایران کیلئے جاسوسی کرنیوالے پاکستانی کوسزا

جرمنی کیخلاف ایران کیلئے جاسوسی کرنیوالے پاکستانی کوسزا

  

برلن، تہران( اے این این ) جرمنی نے ایران کیلئے جاسوسی کرنیوالے ایک پاکستانی کو مجرم قرار دیدیا ،31 سالہ مصطفی حیدر کو غیر ملکی خفیہ ادارے کیساتھ کام کرنے کے جرم میں 4سال ، 3 ماہ قید کی سزا سنادی گئی، مذکورہ شخص پر پاسداران انقلاب کے ایلیٹ یونٹ کی قدس فورس کیلئے جاسوسی کا الزام تھا،دوران تحقیق تفصیلی رپورٹس اور انکی ہزاروں تصاویر، ویڈیوز سمیت روزمرہ معمولات کا پورا ریکارڈ بھی برآمد کرلیاگیا ۔ میڈیا رپورٹ کے مطابق دوران سماعت عدالت کویہ بھی بتایا گیا کہ مصطفی حیدر نے جرمن قانون ساز اور جرمنی و اسرائیلی ادارے کے سابق سربراہ سمیت فرانس و اسرائیل کے معاشیات کے پروفیسر پر ممکنہ حملے کی منصوبہ بندی کرنے سمیت ان دونوں افراد کے گھر، دفاتر تک جانیوالے راستوں، موجود سکیورٹی گارڈز، خفیہ کیمروں اور قریبی پولیس اسٹیشنز کی معلومات بھی اکھٹی کر رکھی تھیں۔خیال رہے جوابی جاسوسی کرنیوالی جرمنی کی خفیہ سروس کو معلومات حاصل ہوئی تھیں کہ ایران کی قدس فورس امریکہ و اسرائیل کے ممکنہ تصادم کے پیش نظر یورپ کو نشانہ بناسکتی ہے۔ کراچی کارہائشی مصطفی حیدر 12ء میں بطور طالبعلم جرمنی آیا اور مغربی شہر بریمن میں رہائش پذیر تھااور جرمنی میں قیام کے دوران اکتوبر 15 ء اور فروری16 میں دو بار ایران گیا جبکہ خفیہ سرگرمیوں کیلئے 2ہزار237 امریکی ڈالروصول کئے ۔

مزید :

صفحہ آخر -