نواز شریف اور آصف زرداری ایک دوسرے کے مفادات کا تحفظ کر رہے ہیں، دونوں نے اپنی کرپشن چھپانے کے لئے چئیر مین نیب کی تقرری کی، پانامہ کیس سے جان چھڑانے کے لئے وزیر اعظم نے پیپلز پارٹی سے ڈیل کی :عمران خان

نواز شریف اور آصف زرداری ایک دوسرے کے مفادات کا تحفظ کر رہے ہیں، دونوں نے ...
نواز شریف اور آصف زرداری ایک دوسرے کے مفادات کا تحفظ کر رہے ہیں، دونوں نے اپنی کرپشن چھپانے کے لئے چئیر مین نیب کی تقرری کی، پانامہ کیس سے جان چھڑانے کے لئے وزیر اعظم نے پیپلز پارٹی سے ڈیل کی :عمران خان

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن) چیئرمین تحریک انصاف عمران نے کہا ہے کہ نواز شریف اور زرداری کے مشترکہ مفادات ہیں وہ اپنے اپنے مفادات کے تحفظ میں مصروف ہیں۔ آیان ملک سے باہر، شرجیل ملک میں اور عاصم حسین کو بھی چھوڑ دیا گیا،قوم کو دونوں پارٹیاں مل کر بے وقوف بنا رہے ہیں۔ نواز اور زرداری نوراکشتی کرتے ہیں ایک دوسرے کو نقصان نہیں ہونے دیں گے ۔پانامہ کیس سے جان چھڑانے کے لئے وزیر اعظم نے پیپلز پارٹی سے ڈیل کی ہے 

سندھ کا انفراسٹرکچر بہتر ہوا، اب پی پی پنجاب کے میدان میں اتر آئی : نتاشہ دولتانہ

اسلام آباد میں نیوز کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے عمران خان کا کہنا تھا کہ ڈاکٹر عاصم کی ضمانت پر خاموش نہیں رہ سکتا۔ ایان علی کی منی لانڈرنگ5کروڑ روپے، حج سکینڈل والا بھی چھوٹ گیا۔ نواز شریف نے اپنی کرپشن بچانے کے لئے پیپلز پارٹی اور ن لیگ نے ڈیل کی ہے۔ تمام فیصلے ڈیل کے تحت ہوئے ہیں۔ پیپلز پارٹی اور ن لیگ کے درمیان کمال کی نورا کشتی ہو رہی ہے۔ پیسہ کہاں سے آرہا ہے، آصف زرداری کو بھی یاد آگئی ہے۔ 2013ءمیں ن لیگ فرینڈلی اپوزیشن بنی رہی ہیں۔ زرداری کا پیٹ کاٹ کر پیسے نکالیں گے شہباز شریف کی تقرریں۔ رائیونڈ کی سولہ ڈشوں پر دونوں بھائی بن گئے اور شہباز شریف کے زرداری کو گھسیٹنے کے دعوے ایک کھانے پر دھرے کے دھرے رہ گئے۔

پنجاب یونیورسٹی میں طلبہ کے مابین تصادم، انتظامیہ نے نئی پابندیاں لگا دیں

عمران خان کا مزید کہنا تھا کہ  آصف زرداری نے بیان دیا کہ دھاندلی کی وجہ سے ن لیگ جیتی ہے۔ساری نورا کشتی ایک منصوبے کے تحت ہو رہی ہے۔ اس ڈرامہ سے قوم کو بے وقوف نہیں بنایا جا سکتا ہے۔ دونوں ایک دوسرے کو تحفظ دے رہے ہیں ایک دوسرے کی کرپشن بچانے کے لئے ڈیل کر رہے ہیں، دونوں منی لانڈرنگ کر رہے ہیں، یہ کبھی ایک دوسرے کا احتساب نہیں کر رہے یہ تحریک انصاف سے خوف زدہ ہیں .

’’کب تک ایمانداری سے چمٹے رہو گے۔میں کسی کو کہہ دیتا ہوں تاکہ وہ ۔ ۔ ۔‘‘ بڑے سیکیورٹی اہلکار کو زرداری کی ایسی پیشکش کہ جان کر پوری قوم حیرت سے ایک دوسرے کو دیکھنے لگےگی

پاکستان تحریک انصاف کے سربراہ کا کہنا تھا کہ  جب تک وزیراعظم کرپٹ رہے گا وہ اداروں کو ٹھیک نہیں کر سکے گا۔ نیب کا چئیرمین نواز شریف کو نہیں پکڑ رہا تو وہ کیسے آصف زرداری کو پکڑے گا۔ کرپٹ وزیر اعظم نے سارا نظام کرپٹ بنا دیا ہے۔میں نے پیپلز پارٹی پر تنقید کا پروگرام نہیں تھا کیوں کہ میں پانامہ کا میچ کھیل رہا ہوں ، اس ڈیل پر میں خاموش نہیں رہوں گا۔

مزید :

قومی -