6 سالہ ننھی کلی کو زیادتی کا نشانہ بنا کر قتل کرنے والے مجرم کو عمر قید و موت کی سزا سنا دی گئی

6 سالہ ننھی کلی کو زیادتی کا نشانہ بنا کر قتل کرنے والے مجرم کو عمر قید و موت ...
6 سالہ ننھی کلی کو زیادتی کا نشانہ بنا کر قتل کرنے والے مجرم کو عمر قید و موت کی سزا سنا دی گئی

  

کوٹ سادات (ڈیلی پاکستان آن لائن) ماتحت عدالت نے کمسن بچی کو اغوا کرکے زیادتی کا نشانہ بنانے کے بعد قتل کرنے والے درندہ صفت مجرم کو عمر قید اور موت کی سزا سنادی ہے۔

وہاڑی میں ماتحت عدالت نے 6 سالہ رمشا کو اغوا کرکے زیادتی کا نشانہ بنانے کے بعد قتل کرنے والے مجرم پپو شاہ کے اقبال جرم کے بعد اسے عمر قید اور موت کی سزا سنادی ہے۔ مجرم نے کچھ عرصہ قبل اینٹوں کے وار کرکے معصوم کلی کو کچل کر رکھ دیا تھا جس کا مقدمہ بچی کے والد جمیل حسین اور چچا شکیل حسین شاہ کی مدعیت میں درج کیا گیا تھا۔

واضح رہے کہ وہاڑی کے نواحی گاﺅں کوٹ سادات میں کچھ عرصہ قبل پپو شاہ نامی مجرم نے 6 سالہ رمشا کو قتل کی نیت سے اغوا کیا تھا۔ اغوا کے بعد ملزم پپو نے ننھی رمشا کو زیادتی کا نشانہ بنایا اور بعد ازاں اینٹوں کے وار کرکے قتل کردیا۔ ننھی بچی کی لاش مجرم کے گھر کے قریب کھیتوں سے برآمد ہوئی تھی، پولیس نے مجرم کو شک کی بنا پر گرفتار کیا تھا ۔ تفتیش میں مجرم نے اعتراف جرم کرلیا اور پولیس کو دیے گئے اپنے اعترافی بیان میں اقرار کیا کہ اس نے اپنے ہی گاﺅں کے رہائشی شخص افتخار حسین عرف کھاری شاہ سے بدلہ لینے کیلئے بچی کو اغوا کیا تھا، وہ بچی کو اغوا کرکے افتخار شاہ کے گھر ڈال کر اسے قتل کے مقدمہ میں پھنسانا چاہتا تھا۔

مزید :

وہاڑی -