کرنٹ خسارہ 11ارب ڈالر سے تجاوز کرنے پر تشویش ہے،شازیہ سلیمان

کرنٹ خسارہ 11ارب ڈالر سے تجاوز کرنے پر تشویش ہے،شازیہ سلیمان

لاہور(کامرس رپورٹر )ویمن چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کی مرکزی رہنماء و سابق صدر شازیہ سلیمان نے وزارت تجارت کی ناقص حکمت عملی کے پیش نظر رواں مالی سال میں کرنٹ خسارہ 11ارب ڈالر سے تجاوز کرنے پر تشویش کا اظہار کیا ہے اور کہا ہے کہ وفاقی حکومت ملکی معیشت کو مستحکم کر نے ،درآمدات میں کمی اور برآمدات میں اضافہ کے لیے ٹھوس حکمت عملی اپنائے جبکہ آئندہ مالی سال کے بجٹ میں صنعتی سیکٹر سمیت کاروباری خواتین کے لیے خصوصی پیکج کا اعلان کرے ۔ گزشتہ روز جاری کر دہ بیان میں شازیہ سلیمان کا کہنا تھا کہ بڑھتا ہواکرنٹ اکاؤنٹ خسارہ ملکی معیشت کو نقصان پہنچا رہا ہے جس سے کاروباری افراد میں بھی تشویش کی لہر دوڑ رہی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ برآمدات میں اضافہ کیلئے سستی توانائی کی فراہمی ناگزیر ہے کیونکہ خطے کے دیگر ممالک میں گیس اور بجلی کے نرخ پاکستان کے مقابلے میں پچاس فیصد کم ہیں اس کے علاوہ وہاں کم اجرتوں پر دستیاب افرادی قوت کے باعث ان ممالک کی برآمدات میں تیزی سے اضافہ ہورہا ہے اس لیے گیس اور بجلی کے نرخوں میں کمی کیلئے فوری اقدامات اٹھائے جائیں کیونکہ صنعتی پیداوار پر آنے والی لاگت میں اضافے کی وجہ سے پاکستانی مصنوعات عالمی مارکیٹ میں جای مسابقت میں پیچھے رہی ہے اور اسی وجہ سے ان کی جگہ دیگر ممالک کی مصنوعات لے رہی ہیں انہوں نے کہا کہ حکومت آئندہ مالی سال کے بجٹ میں کاروباری خواتین کے لیے خصوصی پیکج کا اعلان کر کے ریلیف سے ہمکنار کیا جائے تاکہ پاکستان کی کاروباری خواتین بھی ملکی معیشت کی بہتری کے لیے بڑھ چڑھ کا حصہ لے سکیں۔

مزید : کامرس


loading...