سفارتکاروں کا اخراج امریکی دباؤ اور بلیک میلنگ کا نتیجہ ، منہ توڑ جواب دینگے : روس

سفارتکاروں کا اخراج امریکی دباؤ اور بلیک میلنگ کا نتیجہ ، منہ توڑ جواب دینگے ...

ماسکو(آئی این پی)روسی وزیر خارجہ سرگئی لاوروف نے کہا ہے روس مغربی ملکوں کی گستاخی پر خاموشی اختیار نہیں کرے گا،مغرب کو روسی سفا ر تکاروں کے اخراج کا بھرپور جوب دیا جائے گا، روسی سفارتکاروں کا اخراج امریکی دباؤ اور بلیک میلنگ کا نتیجہ ہے۔غیر ملکی میڈیا کے مطا بق روسی وزیر خارجہ کا ماسکو میں صحافیوں سے بات چیت کرتے ہوئے کہناتھا بعض ممالک نے روسی سفارتکاروں کے اخراج کے سبب ماسکو سے معذرت خواہی بھی کی جس سے پتہ چلتا ہے یہ اقدام امریکی دباؤ اور بلیک میلنگ کا نتیجہ ہے، دباؤ اور بلیک میلنگ عالمی سطح پر امریکہ کا اہم ترین حربہ ہے اور اس سے پتہ چلتا ہے عالمی سطح پر آزادانہ کردار ادا کرنیوالے ممالک بہت تھوڑے ہیں۔سرگئی لاوروف نے ڈبل ایجنٹ قتل کیس کے بارے میں برطانوی وزیراعظم کے بیان کی جانب اشارہ کرتے ہوئے کہا تھریسا مئے اس بیان کے ذریعے اپنے ہی ملک کے عدالتی نظام کی توہین کر رہی ہیں۔قابل ذکر ہے امریکہ، کینیڈا اور یوکرین نیز یورپی یونین کے چودہ رکن ملکوں نے سابق روسی نژاد ڈبل ایجنٹ کے قتل کا الزام روس پر عائد کر کے سو سے زائد روسی سفارتکاروں کو اپنی سرزمین سے نکل جانے کا حکم دیا ہے۔روسی نژاد ڈبل ایجنٹ سر گئی اسکریپال اور اس کی بیٹی کو گزشتہ ماہ لندن میں زہر دے کر قتل کر دیا گیا تھا۔ روس نے قتل کی واردات میں کسی بھی قسم کے کردار کو مسترد کر دیا ہے۔

روس

مزید : صفحہ اول


loading...