بیسٹ وے گروپ کے چیف ایگزیکٹو ضمیر چوہدری کیلئے ستارہ امتیاز

بیسٹ وے گروپ کے چیف ایگزیکٹو ضمیر چوہدری کیلئے ستارہ امتیاز

کراچی (پ ر)پاکستان کو ترقی کی صف میں کھڑا رکھنے کے لئے خدمات کی ادائیگی اور مخیرانہ کام کی وسعت کی توثیق کرتے ہوئے 16023 مارچ 2018 ء کو صدرِ پاکستان کی جانب سے بیسٹ وے گروپ کے چیف ایگزیکٹو ضمیر چوہدری کو ستارۂ امتیاز سے نوازا گیا۔ایوارڈ سے نوازنے کی تقریب یومِ پاکستان پر قصرِ صدارت میں منعقد ہوئی۔ستارۂ امتیاز عوامی خدمت کے لئے پاکستان کے سب سے اعلی شہری اعزاز میں سے ایک ہے۔ اپنی حوصلہ افزائی پر چوہدری ضمیر نے کہا:’’میں حکومتِ پاکستان کی جانب سے اعزاز اور اپنی شناخت ملنے پر بہت خوش ہوں‘‘۔ضمیرچوہدری انگلینڈ اور ویلز میں چارٹرڈ اکاؤنٹنٹس کے انسٹی ٹیوٹ کے فیلو ہیں، وہ کینٹ یونیورسٹی سے سول قانون کے اعزازی ڈاکٹرہیں۔ضمیرچوہدری کو 2016 ء میں ملک�ۂ برطانیہ نے ہول سیل انڈسٹری اور فلاح و بہبود کے لئے برطانوی سلطنت کا کمانڈر (CBE) مقرر کیا تھا۔انہوں نے بیسٹ وے کے کاروبار کو بڑے پیمانے پر مختلف عالمی اتحاد کے ہول سیل کاروبار میں تبدیل کردیا ۔ یہ بزنس گروپ آج پاکستان میں سب سے بڑے سیمنٹ کے کارخانے (بیسٹ وے سیمنٹ لمیٹڈ) اور پاکستان کے دوسرے سب سے بڑے نجی بینک (یو بی ایل) کے علاوہ برطانیہ کے دوسرے سب سے بڑے آزاد ہول سیلر (بیسٹ وے ہول سیل) اور برطانیہ کی تیسری سب سے بڑی ریٹیل فارمیسی (ویل فارمیسی) پر مشتمل ہے۔Bestway برطانیہ کی 8 ویں سب سے بڑی نجی کمپنی ہے جس کے متعدد عالمی مفادات ہیں جس میں ہر سال 630 ملین امریکی ڈالر کامنافع قبل از ٹیکس حاصل کیا جاتا ہے جب کہ 5.0 بلین امریکی ڈالر کا سالانہ کاروبار کیا جاتا ہے۔ اس گروپ میں عالمی طور پر34,000 لوگ ملازم ہیں جن میں سے 22,000 کارکنان پاکستان میں ملازمت کررہے ہیں اور پاکستان کے قومی خزانے میں ہر سال 425 ملین امریکی ڈالر سے ہاتھ بٹاتے ہیں۔ضمیر چوہدری بیسٹ وے فاؤنڈیشن آف پاکستان کے سربراہ ہیں اور پرنس چارلس برطانوی ایشین ٹرسٹ کے برطانیہ کے مشاورتی کونسل کے صدر بھی ہیں، وہ بیسٹ وے بزنس فاؤنڈیشن برطانیہ کے بانی ہیں اور ایک طویل عرصے سے Crimestoppers UK سمیت گروسری ایڈ برطانیہ کے ٹرسٹی ہیں۔گروپ کے مخیرانہ کام کا شعبہ ، بیسٹ وے فاؤنڈیشن کے نام سے 1987 ء میں برطانیہ میں اور بعد ازاں 1997 ء میں پاکستان میں قائم کیا گیا ، جسے پاکستان کے سینٹر آف فلنتھراپی سے منظور کیا گیا ہے۔بیسٹ وے فاؤنڈٖیشن جن قومی اداروں کو دیکھتی ہے ان میں تعلیمی ادارے، پاکستان اور بیرونِ ملک کے سوسائٹیز اور نیشنل چیریٹی ٹرسٹ،پاکستان میں قدرتی آفات سے متاثرہ افراد کی بحالی کی کوششوں کے علاوہ ہر سال معاشرے کی حفاظت کرتے ہوئے 35,000 سے زائد مریضوں کو سحت مند ماحول کی حفاظت کرتے ہوئے مفت طبی سہولیات مہیا کی جاتی ہیں اور ماحولیات کی اقدار کا خیال کیا جاتا ہے۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر


loading...