انسان کی جانب سے چاند اور سیاروں کے سفر کے بارے میں آپ جانتے ہی ہوں گے لیکن اب سورج پر جانے کی تیاری بھی کرلی گئی، اتنی گرمی میں کیسے پہنچا جائے گا؟ انسانی تاریخ کی سب سے حیرتناک خبر آگئی

انسان کی جانب سے چاند اور سیاروں کے سفر کے بارے میں آپ جانتے ہی ہوں گے لیکن اب ...
انسان کی جانب سے چاند اور سیاروں کے سفر کے بارے میں آپ جانتے ہی ہوں گے لیکن اب سورج پر جانے کی تیاری بھی کرلی گئی، اتنی گرمی میں کیسے پہنچا جائے گا؟ انسانی تاریخ کی سب سے حیرتناک خبر آگئی

  


واشنگٹن ( ڈیلی پاکستان آن لائن) امریکی خلائی ایجنسی ناسا نے اپنے پہلے خطرناک اور جان لیوا ’سورج کو چھونے‘ کے اپنے تاریخی پارکر سولر پروب مشن کی تیاریاں مکمل کر لی ہیں۔

سورج کی گرمی اور نظام شمسی کے راز کھوجنے کے لیے مشن تیار کیا گیا ہے جس پر ناسا گزشتہ سال سے کام کر رہا ہے ،تاریخی پارکر سولر پروب مشن میں سورج کو چھونے اور اس کی تپش کی کھوج لگانے کی کوشش کی جائے گی۔ناسا نے عام عوام سے بھی آن لائن درخواستیں طلب کرلی ہیں، جو اس کے تاریخی پارکر سولر پروب مشن کو دیکھنا چاہتے ہیں۔

مشن کے لیے خصوصی خلائی جہاز تیار کیا گیا ہے جو ایک چھوٹی گاڑی کی طرح ہے، جسے ہفتے کے روز امریکی ریاست فلوریڈا پہنچایا جائے گا۔یہ خلائی جہاز سورج کی سطح سے 40 لاکھ میل دور مدار میں گردش کرے گا جسے مشن کے دوران انتہائی گرمی اور تابکاری کا سامنا کرنا پڑے گا۔تاہم اس میں موجود 4.5 انچ موٹی کاربن کمپوزٹ شیلڈ اسے سورج کی تپش سے محفوظ رکھے گی۔ناسا کے اعلامیے کے مطابق سورج پر بھیجے جانے والے مشن کے لیے تمام تیاریاں مکمل کرلی گئی ہیں جسے رواں برس جولائی میں خلا میں روانہ کیا جائے گا۔

واضح رہے کہ انسان کی جانب سے سورج کے اتنا قریب جانے کا یہ پہلا تجربہ ہوگا، جو خوفناک حدت اور ریڈی ایشن کا سامنا کرے گا۔اس مشن کا مقصد نظام شمسی کے رازوں سے پردہ اٹھانا، ستاروں کی فزکس جاننا اور سورج کے بارے میں مزید معلومات حاصل کرنا ہے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس /بین الاقوامی


loading...