عمران خان نے جمائمہ سے پیسے لیکر بنی گالا بنایا: اسفند یارولی

عمران خان نے جمائمہ سے پیسے لیکر بنی گالا بنایا: اسفند یارولی

صوابی(بیورورپورٹ)اے این پی ضلع صوابی کی چاروں تحصیلوں صوابی ، ٹوپی ، رزڑ اور چھوٹا لاہور کے نو منتخب عہدیداروں اور ضلع ناظم حاجی محمد زاہد خان نے جمعرات کے روز ولی باغ چار سدہ میں پارٹی کے سر براہ اسفند یار ولی خان کے ساتھ خصوصی ملاقات کی صوباء سیکرٹری جنرل ایمل ولی خان بھی اس موقع پر موجو د تھے ۔ اسفند یارولی خان نے پارٹی کے رہنماؤں کو خوش آمدید کہتے ہوئے کہا کہ صوابی باچا خان بابا کا گھر ہے اور گھر رہے گا اور یہ اے این پی کے ہر ورکر کو ثابت کرنا ہو گا انہوں نے کہا کہ اے این پی سے صوابی کے ہر کارکن اور فرد کا دلی محبت ہے اس لئے اور کوئی راستہ ہی نہیں وقت کا تقاضا ہے کہ تمام پختون سرخ جھنڈے تلے متحد ہو جائے ۔ انہوں نے کہا کہ پشتو زبان نہ سیکھنے والے عمران کس طرح خان ہو سکتا ہے انہوں نے اپنی بیوی سے حق مہر لے کر بنی گالہ بنایا انہوں نے کہا کہ آنے والے صوبائی الیکشن میں جو بھی صوبائی صدر منتخب ہو جائیگا میں ان کو واضح ہدایت جاری کرونگا کہ وہ صوبے کے ہر ضلع جا کر خدائی خدمتگار اور ان کے بچے جو گھروں میں بیٹھے ہوئے ہیں ان کو باچا خان بابا کے قافلے میں لا کر پارٹی کاز کے لئے عملی کر دار ادا کرنے کے لئے اپنے ساتھ لے کر چلیں تمام ناراض کارکنوں کو منا کر پارٹی کو بھر پور انداز میں منظم اور مستحکم کرنا ہو گا انہوں نے کہا کہ عام انتخابات میں جو کھیل کھیلا گیا اس پر اے این پی کے ہر ورکر کو سوچنا ہو گا انہوں نے کہا کہ صوبے میں تنظیم سازی اور ممبر سازی ایک جمہوری عمل تھا جو مکمل ہو گیا ہے اس جمہوری عمل میں ہار جیت ہو سکتا ہے اس لئے جو امیدوار ناکام ہو چکے ہیں ان کو سب سے زیادہ پارٹی کاز کے لئے کام کرنا ہو گا انہوں نے کہا کہ اگر وہ پارٹی کا مرکزی صدر منتخب ہو گیا تو سب سے پہلا دورہ صوابی کا کر کے ایک جلسہ منعقدکرینگے۔ انہوں نے ضلعی اور خاص کر تحصیل تنظیموں پر زور دیا کہ وہ اپنے اپنے تحصیلوں کے لسٹ تیار کر کے ضلعی تنظیم کو بھیجیں تاکہ ضلع اس لسٹ کو صوبائی صدر بھیج دی جس پر صوبائی صدر ہر ضلع جا کر گھر بیٹھے خدائی خدمتگاروں اور کارکنوں کے پاس بطور جر گہ جا کر پارٹی میں فعال کرائیں ۔ ضلعی ناظم حاجی محمد زاہد خان کے علاوہ تحصیل صدر صوابی نوابزادہ ، ضلعی قائم مقام صدر حاجی غلام حقانی ، سابق ضلعی جنرل سیکرٹری حاجی محمد اسلام خان اور دیگر اراکین بھی اس موقع پر موجود تھے۔

مزید : صفحہ اول