’ حکومت اور ن لیگ میں پچھلے دروازے سے این آر او کا کوئی ثبوت نہیں ‘

’ حکومت اور ن لیگ میں پچھلے دروازے سے این آر او کا کوئی ثبوت نہیں ‘
’ حکومت اور ن لیگ میں پچھلے دروازے سے این آر او کا کوئی ثبوت نہیں ‘

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) پیپلز پارٹی کے رہنما قمر زمان کائرہ نے کہاہے کہ بلاول بھٹو زرداری نے کہاہے کہ عمران خان کہتے تھے کہ میں ن لیگ کو این آر او نہیں دوں گا لیکن عدالت نے نواز شریف کو ضمانت دیدی ،شہباز شریف کانام ای سی ایل سے نکال دیا ، ان کی بات اس حد تک ہے ، اس میں این آر او دینے کی کوئی بات نہیں ہے ۔

دنیا نیوز کے پروگرام ”اختلافی نوٹ“ میں گفتگو کرتے ہوئے قمر زمان کائرہ نے کہا کہ پچھلے دس سال میں اپوزیشن کے کسی سیاسی لیڈر کی کوئی تقریر دکھا دیں جس میں اس نے تنقید کے علاوہ کوئی پالیسی دی ہو، پالیسیاں حکومت دیا کرتی ہے ، اپوزیشن حکومت کی پالیسوں پر تنقید کرتی ہے ، اپوزیشن الیکشن کے دوران اپنا متبادل بیانیہ پیش کرتی ہے ۔

انہوں نے کہا کہ بلاول نے کہاہے کہ عمران خان کہتے تھے کہ میں ن لیگ کو این آر او نہیں دوں گا لیکن عدالت نے نواز شریف کو ضمانت دیدی اور شہباز شریف کانام ای سی ایل سے نکال دیا ، ان کی بات اس حد تک ہے ، اس میں این آر او دینے کی کوئی بات نہیں ہے۔ انہوں نے کہا کہ میرے پاس ایسا کوئی ثبوت نہیں ہے کہ حکومت اور ن لیگ کے درمیان پچھلے دروازے سے کوئی این آر او ہورہاہے ، پیپلز پارٹی کی اس حوالے سے کوئی رائے نہیں ہے لیکن اخبار پر لکھا جارہاہے اور کئی صحافیوں نے بھی اس پر رائے دی ہے کہ جب مریم نواز کی ٹوئٹس آنا بند ہوئیں تو تلخیاں کم ہوئی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ پیپلز پارٹی کسی بیک ڈور پر یقین نہیں کرتی ، ہمیں حکومت اور نیب کے ساتھ تلخی ہے کہ پیپلز پارٹی کے ساتھ ایک خاص طرح کا رویہ اختیار کیا جارہا ہے ۔

مزید : قومی