روس نے کورونا وائرس کے علاج کی دوا ایجاد کرنے کا دعویٰ کردیا

روس نے کورونا وائرس کے علاج کی دوا ایجاد کرنے کا دعویٰ کردیا
روس نے کورونا وائرس کے علاج کی دوا ایجاد کرنے کا دعویٰ کردیا

  

ماسکو(مانیٹرنگ ڈیسک) روس نے کورونا وائرس کی دوا ایجاد کرنے کا دعویٰ کر دیا۔ ایکسپریس ٹربیون کے مطابق روسی حکام نے بتایا ہے کہ انہوں نے ایک دوا تیار کر لی ہے جو کورونا وائرس کا علاج کر سکتی ہے۔ یہ ملیریا کی دوا ’میفلوکوئن‘ کو بنیاد بناتے ہوئے تیار کی گئی ہے۔ میفلوکوئن ایسی مو¿ثر دوا ہے جو نہ صرف اندرونی جلن و سوزش کو کم کرتی ہے بلکہ یہ جسم میں وائرس کی مزید نمو کو روکتی ہے۔

روس کی فیڈرل بائیو میڈیکل ایجنسی کے ماہرین نے بتایا ہے کہ اس دوا کے حوصلہ افزاءنتائج سامنے آئے ہیں۔ ایجنسی کی سربراہ ویرونکا سووروسکا کا کہنا تھا کہ ”ہم نے میفلوکوئن میں مزید اینٹی بائیوٹکس شامل کرکے یہ دوا بنائی ہے۔ بنیادی طور پر یہ میفلوکوئن ہی ہے لیکن مزید اینٹی بائیوٹکس شامل کرنے سے یہ زیادہ طاقتور ہو گئی ہے۔ ہم نے مریضوں پر اس کے تجربات کیے ہیں جس سے ان کے خون کے پلازما اور پھیپھڑوں میں اینٹی وائرل ایجنٹس کی تعداد بڑھ گئی۔اس سے ہم اب تک کئی مریضوں کا علاج کر چکے ہیں۔“ واضح رہے کہ روس میں اب تک کورونا وائرس کے 1ہزار 264مریض سامنے آ چکے ہیں۔ ان میں سے 49صحت مند ہو چکے ہیں جبکہ 6کی موت ہو چکی ہے۔

مزید :

بین الاقوامی -تعلیم و صحت -کورونا وائرس -