بریکنگ : بڑے ملک نے جاپان کی جانب میزائل چلا دیا ، سب سے خطرناک خبر آگئی

بریکنگ : بڑے ملک نے جاپان کی جانب میزائل چلا دیا ، سب سے خطرناک خبر آگئی
بریکنگ : بڑے ملک نے جاپان کی جانب میزائل چلا دیا ، سب سے خطرناک خبر آگئی

  

سیول (ڈیلی پاکستان آن لائن )امریکی دھمکیاں بھی کام نہ آئیں، شمالی کوریا نے تین ہفتوں میں تیسرا کامیاب میزائل تجربہ کر لیا ،میزائل جاپان کی سمت داغا گیا جس سے کسی نقصان کی اطلاع نہیں ملی تاہم میزائل حملے پر جنوبی کوریا اور جاپان نے شدید احتجاج کیا۔

تفصیلات کے مطابق جنوبی کوریا کے حکام کا کہنا ہے کہ شمالی کوریا نے جاپانی کی جانب بلیسٹک میزائل داغا ہے ۔ جنوبی کوریا کی فوج نے دعویٰ کیا ہے کہ سکڈ میزائل سمندر میں گرنے سے پہلے 450 کلومیٹر دور تک گیا جبکہ جاپان کا کہنا ہے کہ میزائل ان کے اکنامک زون میں گرا۔

جنوبی کوریا کے جوائنٹ چیفس آف سٹاف نے اپنے بیان میں مزید کہا کہ میزائل کو شمالی کوریا کے مشرقی ساحل سے چلایا گیا جس کے بعد صدر نے نیشنل سیکیورٹی کونسل کی ہنگامی میٹنگ طلب کر لی ہے ۔

جاپانی وزیراعظم ابی شینزو نے میزائل تجربے کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا کہ شمالی کوریا کے پاس مختلف رینج کے 1ہزار میزائل ہیں جو مستقبل میں امریکا کو نشانہ بنانے کے قابل ہو سکیں گے۔’’شمالی کوریا کا مسئلہ انٹرنیشنل کمیونٹی کی اولین ترجیح بن گیا ہے ، امریکا کے ساتھ مل کر اس کے خلاف سخت ایکشن لیں گے‘‘ ۔

چاپانی وزیر نے میزائل کے سمندر میں گرنے کی تصدیق کرتے ہوئے کہا ہے کہ اس سے کوئی نقصان نہیں پہنچا ۔”جاپان شمالی کوریا کے پے در پے اقدامات کو برداشت نہیں کر سکتا ، ہم بیلسٹک میزائل پر شمالی کوریا سے شدید احتجاج کرتے ہیں اور اس اقدام کی مذمت کرتے ہیں “۔

ادھر وائٹ ہاﺅس کا کہنا ہے کہ امریکی صدر ٹرمپ کو بھی اس میزائل حملے سے آگاہ کر دیا گیا ہے اور امریکی حکام کے مطابق انہوں نے اس مختصر رینج کے میزائل کو چھ منٹ تک ٹریس کیا ۔

مزید : بین الاقوامی