چینی صوبے گوئی زو میں آئی ٹی مرکز بنانے کا فیصلہ

چینی صوبے گوئی زو میں آئی ٹی مرکز بنانے کا فیصلہ

  



گوئی یوانگ(آئی این پی/شِنہوا)چینی بھارتی آئی ٹی انڈسٹری کے بڑے صنعت کار نے چین کے شمال مغربی صوبے گوئی زو میں آئی ٹی مرکز بنانے کا فیصلہ کیا ہے۔تاکہ دونوں ممالک کے درمیان مشترکہ ترقی کے ذریعے تعاون کو فروغ دیا جا سکے۔گوئی یانگ گوئی زو کا دارالحکومت ہے جس نے بھارت کی ایک غیر منافع بخش آئی ٹی صنعتی ایسوسی ایشن نسکام اور بھارت کی ایک اور کمپنی ٹیلنٹ ڈیلویلپمنٹ انٹرپرائز کیساتھ مل کر کئی منصوبے شروع کرنے کا پروگرام بنایا ہے۔نسکام (گوئی یانگ)آئی ٹی اور این آئی آئی ٹی بگ ڈیٹا کالج کا چین کی بین الاقوامی بگ ڈیٹا صنعتی نمائش 2018موقع پر ایک فورم میں افتتاح کیا گیا تھا۔گوئی یانگ کو چین کی بگ ڈیٹا ویلی کے نام سے یاد کیا جاتا ہے۔جس نے 2017میں 81.7ارب یوآن(12.8امریکی ڈالر)کا ریونیو حاصل کیا۔شہر کے کل ریونیو میں اس کا حصہ 33فیصد رہا

،گوئی یانگ ہائی ٹیکنالوجی زون 8000مربع میٹر رقبے پر واقع ہے جہاں دیگر کاروباری کمپنیاں بھی موجود ہیں۔3برسوں کے دوران یہاں سے 275ملین یوآن کا ریونیو حاصل ہوا،یہاں 25کاروباری کمپنیاں اور 500سے زیادہ سافٹ وئیر انجیئرکام کر رہے ہیں۔

مزید : کامرس


loading...