شکیل الرحمن خان کا استعفیٰ منظور ، عاصمہ حامد ایڈووکیٹ جنرل پنجاب مقرر

شکیل الرحمن خان کا استعفیٰ منظور ، عاصمہ حامد ایڈووکیٹ جنرل پنجاب مقرر

  



لاہور(نامہ نگارخصوصی) پنجاب حکومت نے شکیل الرحمن خان کا استعفیٰ منظور کرتے ہوئے ان کی جگہ عاصمہ حامد کونیا ایڈووکیٹ جنرل پنجاب مقررکردیا ہے ۔عاصمہ حامد سابق گورنر پنجاب شاہد حامد کی صاحبزادی اور سابق وفاقی وزیر قانون زاہد حامد کی بھتیجی ہیں ۔27مئی کو نئے لاء افسروں کے تقرر کے معاملہ پروزیر اعلی پنجاب سے اختلافات پر ایڈووکیٹ جنرل شکیل الرحمن نے اپنے عہدہ سے استعفیٰ دے دیاتھا۔شکیل الرحمن نے 8نئے اسسٹنٹ ایڈووکیٹس جنرل کے تقرر پر تحفظات کا اظہار کیا تھا جسے حکومت نے نظر انداز کیااوراتوار کے روز ہی نئے لاء افسروں کے تقرر کا نوٹیفکیشن جاری کردیاجس کے 2گھنٹے بعد شکیل الرحمن خان نے اپنے عہدہ سے استعفیٰ دے دیا تھا۔پنجاب حکومت نے ایڈووکیٹ جنرل شکیل الرحمن خان کے تحفظات کے باوجود جن وکلاء کو اسسٹنٹ ایڈووکیٹ تعینات کیا ان میں بیرسٹر اسجد سعید، محمد عامر ثناء اللہ، محمدطارق محمود بٹ، احمد حسن رانا، محمد طارق ندیم، بیرسٹر بشریٰ ثاقب، آصف افضال بھٹی اور چودھری محمد جواد یعقوب شامل ہیں۔ یاد رہے ماہ رواں میں تنخواہوں میں اضافہ ہونے کے بعد اسسٹنٹ ایڈووکیٹ جنرل پنجاب کی تنخواہ 5لاکھ 40ہزار روپے ہو چکی ہے۔

مزید : صفحہ اول