کبیر والا ، آتشزدگی سے مرنیوالے 3افراد سپرد خاک ، سوگ کی فضا برقرار بازاربند رہے

کبیر والا ، آتشزدگی سے مرنیوالے 3افراد سپرد خاک ، سوگ کی فضا برقرار بازاربند ...

  



کبیروالا،اڈا کوٹ بہادر،بارہ میل(نمائندہ پاکستان،سٹی رپورٹر،نامہ نگار)مرکزی بازار میں آتشزدگی کے المناک واقعہ میں 3افراد کے جاں بحق ہونے والوں کے سوگ میں بازار بند،سوگ کی فضا برقرار رہی تفصیل کے مطابق کبیروالا شہر کے اہم تجارتی مرکز ’’مین بازار ‘‘ میں واقع(بقیہ نمبر16صفحہ12پر )

شادی بیاہ کے لئے سجاوٹ کا سامان فروخت کرنے والی ملک نذر احمد کی دکان میں گزشتہ سے پیوستہ شام ہونیوالی خوفناک آتشزدگی میں جان بحق ہونیوالے افراد کی تعداد تین ہوگئی ہے ۔گزشتہ نصف شب سے قبل ریسکیو 1122کی امدادی ٹیموں نے اسسٹنٹ کمشنر کبیروالا شیخ محمد طاہر اور ڈی ایس پی کبیروالا کی زیرنگرانی کئے گئے آپریشن میں مذکورہ دکان کے ایک ملازم محمد اقبال اور ایک مزدور محمد عمر کی سوختہ حالت میں نعش ملبے سے نکال لی تھیں ،جس کے بعد واقعات کے تناظر میں ملبے کے نیچے دکان کے دوسرے ملازم غلام قادر عرف پنوں اور ایک مزید مزدور کے دبے ہونے کی اطلاعات تھیں لیکن رات ڈیڑھ بجے کے لگ بھگ دکان کے ملازم غلام قادر عرف پنوں کی نعش مل گئی ۔جان بحق ہونے والوں میں دکان کے ملازمین محمد اقبال کا تعلق مولاپور ،غلام قادر عرف پنوں کا بستی کوڑے والی اور مزدور محمد عمر کا تعلق چک نمبر 75/10Rخانیوال سے بتایا جاتا ہے ،جہاں مرحومین کو نمازجنازہ ادا کرکے سپرد خاک کردیا گیا ۔مذکورہ خوفناک آتشزدگی کا سبب مبینہ طور پر ’’آتش بازی ‘‘ کاسامان ہونے کی اطلاعات پر حکام بالا کی ہدایات سرکل خانیوال کی پولیس اور سیکورٹی اداروں پر مشتمل تحقیقاتی ٹیم نے گزشتہ روز متاثرہ مقام کا دورہ کیا اور عینی شاہد ین سے واقعات اور حقائق کی روشنی میں ’’آتش بازی ‘‘ کے سامان کی موجودگی بارے معلومات حاصل کیں ،جس پر عینی شاہدین نے اپنے قلم بند کرائے بیانات میں متاثرہ دکان میں آتش بازی کا سامان اور واقعہ کے وقت کسی قسم کی دھماکے ہونے کی مکمل تردید کی اور جبکہ تحقیقاتی ٹیم کو بھی جائے وقوعہ سے مذکورہ آتشزدگی کے پس منظر میں آتش بازی کا سامان ہونے کے کوئی ٹھوس ثبوت نہ مل سکے ہیں۔سابق سپیکر قومی سید فخرامام نے اسلام آباد سے ٹیلی فون پر مذکورہ سانحہ پر انتہائی افسوس اور غم کا اظہار کرتے ہوئے لواحقین کے غم میں برابر شریک ہونے کا اظہار کرتے ہوئے مرحومین کیلئے بلندی درجات کی دعا کی ہے ۔علاوہ ازیں خوفناک آتشزدگی کے واقعہ کے بعد ممبر صوبائی سید حسین جہانیاں گردیزی،سید گروپ کے مرکزی رہنما سید عابدامام،ممبر پنجاب بار کونسل حاجی عبدالعزیز خان پنیاں ایڈووکیٹ،چیئرمین میونسپل کمیٹی کبیروالا راؤ سلطان احمد خاں ،تحریک انصاف کے رہنما سردار شہباز احمد خان سیال،لیگی رہنما رانا عرفان محمود خاں ،عوامی خدمت گروپ کے چیئرمین وعہدیداران مولانا عبدالخالق رحمانی،ملک محمد اشرف تھہیم،قاری ظہور احمد ،مرکزی انجمن تاجران کبیروالا کے رہنماؤں مرزا فقیر حسین ،ملک حاجی محمد اشرف،میاں سلیم رضا چاون ،حاجی شفیق صدیق دھاریوال سمیت متعد د شخصیات نے متاثرہ جگہ کا دورہ کیا اور واقعہ پر اظہار افسوس کرتے ہوئے پسماندگان کے ساتھ اظہار تعزیت کیا اور حکومت سے مطالبہ ہے کہ وہ مذکورہ سانحہ میں جان بحق ہونے والے افراد کے ورثاء کیلئے مالی امداد دینے کا اعلان کریں ۔ممبر قومی اسمبلی بیرسٹر رضا حیات ہراج،قائد سید گروپ ڈاکٹر سید خاور علی شاہ،چیئرمین ضلع کونسل انجینئر محمد رضا سرگانہ ،حبیب بینک ورکرز فرنٹ کے مرکزی وائس چیئرمین سید منتظر مہدی،سادات فاؤنڈیشن کے رہنما سید سہیل عابدی اور دیگر نے بھی مذکورہ سانحہ پر انتہائی افسوس اور غم کا اظہار کرتے ہوئے لواحقین کے غم میں برابر شریک ہونے کا اظہار کرتے ہوئے مرحومین کیلئے بلندی درجات کی دعا کی۔

سانحہ کبیروالا

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...