پشاور شہر کی خوبصورتی اور عظمت رفتہ بحال کرنے کیلئے اربوں کے میگا پراجیکٹ ششروع کئے :پرویز خٹک

پشاور شہر کی خوبصورتی اور عظمت رفتہ بحال کرنے کیلئے اربوں کے میگا پراجیکٹ ...

  



پشاور( سٹاف رپورٹر)وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا پرویز خٹک نے کہا ہے کہ اگراس ملک میں میرٹ، انصاف اور شفافیت پر مبنی نظام لانا ہے تو عوام کو عمران خان کے ساتھ چلنا ہوگا کیونکہ اس ملک کو ان جیسے ایماندار لیڈر کی ضرورت ہے۔ دنیا میں جہاں جہاں بھی ایماندار قیادت آئی ہے تو انہوں نے اپنے قوم کیلئے ایک وژن دی ہے اور ایماندار قیادت کی بدولت وہ قومیں بام عروج تک پہنچ چکی ہیں۔ افسوس سے کہنا پڑتا ہے کہ ہمارے ملک میں محروم اور کمزور کیلئے الگ پاکستان اور طاقتور کیلئے الگ پاکستان ہے مگر اب یہ فرسودہ اور دہرا نظام نہیں چلے گا کیونکہ عوام میں شعور آگیا ہے اور وہ پی ٹی آئی کے ایک پاکستان کے وژن کا ساتھ دے رہے ہیں ۔یہ ملک اسلئے بنا تھا کہ یہاں پر تمام لوگوں کو انصاف کے یکساں مواقع میسر ہوں مگر برسراقتدار حکمرانوں نے عوام کو یہ حق نہیں دیا ۔وکلاء برادری کا پاکستان تحریک انصاف پر اعتماد اور عمران خان کے قافلے میں شامل ہونا ایک خوش آئند بات ہے اور ان کو اپنے فیصلے پر ہمیشہ خوشی رہے گی۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے آج وزیراعلیٰ ہاؤس پشاور میں پشاور کے پی ٹی آئی رہنما اکبر خان مہمند اور اظہر یوسف ایڈوکیٹ کی توسط سے خیبرپختونخوا بارکونسل کے ممبران وکلاء کی ایک شمولیتی تقریب سے بطور مہمان خصوصی خطاب کے دوران کیا۔شمولیتی تقریب میں خیبرپختونخوا بارکونسل کے ممبران وکلاء شاہ فیصل اتمانخیل ایڈوکیٹ، بشیرخان وزیر ایڈوکیٹ، طاہر شہزاد ایڈوکیٹ، سید محمد سجاد ایڈوکیٹ، سید رحمت علی شاہ ایڈوکیٹ، حسنین آغا ایڈوکیٹ، میاں آصف آمان ایڈوکیٹ اور اظہر یوسف خان ایڈوکیٹ سمیت تقریباً 39 وکلاء نے پاکستان تحریک انصاف میں شمولیت کا باضابطہ طور پر اعلان کیا اور وزیراعلیٰ کو اپنی طرف سے بھرپور تعاون کا یقین دلایا۔ اس موقع پر شمولیتی تقریب سے خطاب کے دوران وزیراعلیٰ نے کہا کہ پاکستان تحریک انصاف کی صوبائی حکومت نے اپنی پانچ سالہ دور اقتدار میں ایمانداری سے ناکارہ نظام کی درستگی اور اسے صحیح پٹڑی پر ڈالنے کی کوشش کی کیونکہ جب ہمیں اقتدار ملا تو آوے کا آوا بگڑا ہوا تھا ۔انہوں نے کہا کہ ہم نے رشوت، شفافیت اور میرٹ کی بحالی پر فوکس کیا اور ہسپتالوں اور سرکاری اداروں کی حالت زار کو ٹھیک کرنے پر توجہ دی اور آج ہر شعبہ درست سمت میں اپنا کام کر رہا ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ ہم نے سرکاری محکموں میں سیاسی مداخلت کا راستہ بند کیا ۔وزیراعلیٰ نے کہا کہ ہمارے ملک کو اگر اللہ تعالیٰ نے ایماندار قیادت دیا تو بہت کم وقت میں یہ ملک تبدیل ہو سکتا ہے اور اس وقت صرف عمران خان کی قیادت میں ہمارے پاس ایماندار قیادت موجود ہے۔

پشاور( سٹاف رپورٹر)وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا پرویز خٹک نے پیر کے روز پجگی تا ورسک روڈ لنک رنگ روڈ کا افتتاح کیا مذکورہ رنگ روڈ 3.4 کلومیٹرپر محیط ہے اور اس کی تعمیر پر تقریباً 3 ارب روپے لاگت آئی ہے جس میں دو فلائی اوور، دو چھوٹے پل اور سروس روڈ شامل ہے اس منصوبے کو دو سال کی مدت میں پایہ تکمیل تک پہنچایا گیا جس سے پشاور شہر میں بہترین سفری سہولیات کا ایک اہم ذریعہ میسر آئے گا افتتاح کے موقع پر رکن صوبائی اسمبلی ارباب وسیم حیات، پی ٹی آئی کے رہنما نور عالم خان، پی ڈی اے اور دیگر متعلقہ محکمہ جات کے اعلیٰ حکام اور عوام کی کثیر تعداد موجود تھی۔ افتتاح کے بعد منعقدہ تقریب سے وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا پرویز خٹک نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پشاور شہر کی خوبصورتی اور عظمت رفتہ کو بحال کرنے کیلئے موجودہ صوبائی حکومت نے کئی میگا پراجیکٹس شروع کئے ہیں جن کی تکمیل سے یہ شہر تیزتر ترقی کرے گا انہوں نے کہا کہ ہمیں حکومت ملتے وقت پشاور شہر انتہائی بدحالی میں ہمیں ملا تھا جہاں پر تجاوزات تھے اور قبضہ مافیا کا راج تھا تا ہم ہماری کوشش رہی کہ اس شہر کو دنیا کے جدید شہروں کے برابر لایا جائے انہوں نے کہا کہ ہماری حکومت نے شہر پشاور میں پر آسائش اور آرام دو سفر کیلئے بی آر ٹی کا منصوبہ شروع کیا اور یہ پاکستان اور پوری دنیا میں تیز ترین تعمیراتی منصوبہ ہے جس کی مدت دیگر میٹرو منصوبوں سے کئی گناں کم ہے کیونکہ لاہور کا میٹرومنصوبہ 15 مہینوں اور پنڈی اسلام آباد کا ڈیڑھ سال میں پایہ تکمیل تک پہنچایا گیا ہے اور پشاوربی آر ٹی 8 مہینوں کی قلیل مدت میں مکمل ہو جائے گا جس میں 30 کلومیٹر مرکزی روٹ اور 50 کلومیٹر چارسدہ روڈ، ورسک روڈ اور کوہاٹ روڈ کے ساتھ لنک سڑکوں پر شامل ہے انہوں نے کہا کہ اس منصوبے میں 250 بس سٹاف ہونگے اور شہر میں پرانی گاڑیوں کو ختم کر کے ہر طرف ائرکندیشنڈ بسیں چلے گی جس میں 80 بسیں مرکزی روٹ اور 200 لنک سڑکوں پر چلیں گی۔ وزیراعلی نے کہا کہ شہر پشاور میں پرانہ اڈہ چمکنی لے جانے کا منصوبہ بھی ترقیاتی پروگرام میں شامل ہے جبکہ وادی پشاور کیلئے سی پیک گریٹر ریل سسٹم بھی بنایا جائے گا جسکے ذریعے پشاور ، چارسدہ اور نوشہرہ تک ریل چلے گی۔ انہوں نے کہا کہ جب یہ منصوبے مکمل ہو جائیں گے تو شہر کی ترقی واضح طور پر نظر آئے گی۔ انہوں نے کہا کہ ہم نے شہر میں سیروتفریح کیلئے ایک خوبصورت چڑیاگھر بھی تعمیر کیا جس سے آج روزانہ ہزاروں کی تعداد میں لوگ لطف اندوز ہوتے ہیں جبکہ شہر کی پرانی تاریخ اور عظمت رفتہ کو بحال کرنے کیلئے گورگھٹڑی میں ایک کلومیٹر تک طویل علاقے پر پرانی تاریخی عمارتوں کی تزین و آرائش کی ہے جو اس شہر کی پرانی تاریخ کی عکاسی کرتی ہیں انہوں نے کہا کہ اس شہر کی تعمیر و ترقی کیلئے پہلے کسی نے توجہ نہیں دی حالانکہ اس شہر کی ترقی کیلئے قائم ادارہ پی ڈی اے کے پاس بہت فنڈ تھے لیکن حیرانگی کی بات ہے کہ گذشتہ حکومتوں میں یہ فنڈ کدھر گئے۔ انہوں نے کہا کہ ہم نے پی ڈی اے کے زریعے کئی بڑے منصوبے اس شہر میں شروع کئے ہیں اور گذشتہ 5 سالوں میں35 ارب روپے پی ڈی اے سے ترقیاتی منصوبوں کیلئے حاصل بھی کیں ہیں انہوں نے کہا کہ پی ٹی آئی دوبارہ برسراقتدار آئے گی اور اس شہر کی ترقی و خوشحالی کیلئے اپنی کوششیں مزید جاری رکھے گی۔

پشاور( سٹاف رپورٹر)وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا پرویز خٹک نے کہا ہے کہ انکی حکومت نے کوہستان ، تورغر اور بٹگرام جیسے پسماندہ اضلاع کے مسائل ترجیحی بنیادوں پر حل کئے ہیں پی ٹی آئی عوام کی یکساں خدمت پر یقین رکھتی ہے ہم نے الیکشن کے نتائج یا ووٹ کو اپنے ایجنڈے پر اثر انداز نہیں ہونے دیا اور بغیر کسی لالچ کے تمام اضلاع میں عوام کو خدمات کی فراہمی یکساں جذبے کے تحت یقینی بنائی کیونکہ ہم عام آدمی کی زندگی میں آسانی پیدا کرنا چاہتے ہیں اس مقصد کیلئے پانچ سال میں دستیاب وسائل کے مطابق ہر ممکن اقدامات کئے65سال کی عوامی محرومیوں کو دور کرنے کیلئے ٹھوس بنیادیں رکھدیں تاہم ابھی بہت کچھ کرنے کی ضرورت ہے پی ٹی آئی عوام کے تعاون سے دوبارہ حکومت میں آ کر تبدیلی اور خوشحالی کا سفر جاری رکھے گی ۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے ممبر صوبائی اسمبلی اور پی ٹی آئی کے ریجنل صدر زر گل خان کی وساطت سے وزیر اعلیٰ ہاؤس پشاور میں کولی پالس کوہستان ، تورغر اور بٹگرام کے 100رکنی مشترکہ وفد سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔تورغر سے ایم پی اے زرین گل بھی اس موقع پر موجود تھے وفد نے پسماندہ اضلاع کو ترقی دینے اور عوام کے دیرینہ مطالبے پر نئے اضلاع اور تحصیلوں کی تخلیق پر وزیر اعلیٰ کا شکریہ ادا کیا اور صوبائی حکومت کی صحت، تعلیم، پولیس اور دیگر شعبوں میں تبدیلی کیلئے اٹھائے گئے اقدامات کو سراہا اور یقینی دھانی کرائی کہ آئندہ انتخابات میں کوہستان ، بٹگرام اور تورغر سے قومی و صوبائی اسمبلیوں کی نشستیں پی ٹی آئی جیتے گی وزیر اعلیٰ نے اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ انکی حکومت نے ترقیاتی اور اصلاحاتی سرگرمیوں میں عوامی مفاد کو پیش نظر رکھا ہے اور اسی مقصد کے تحت نئے اضلاع اور تحصیلوں کی تخلیق عمل میں لائی گئی ہے وزیر اعلیٰ نے کہا کہ ترقیاتی کام صوبہ بھر میں کئے گئے ہیں اور انکی اہمیت اپنی جگہ ہے تاہم صوبائی حکومت نے نظام کی تبدیلی پر خصوصی توجہ دی ہے ماضی کے تباہ حال اداروں کو بحال کیا گیا ہے انہوں نے کہا کہ 35ارب روپے صرف پرائمری سکولوں کا معیار بلند کرنے کیلئے خرچ کئے گئے ہیں اسی طرح صحت، پولیس اور دیگر شعبوں میں بھی قابل عمل اصلاحات کی گئی ہیں صوبائی حکومت کو ہر ادارے اور شعبے میں کافی وسائل خرچ کرنا پڑے کیونکہ جب ہم حکومت میں آئے تو کوئی ایک محکمہ بھی ٹھیک طریقے سے کام نہیں کر رہا تھا صوبائی حکومت کے پہلے تین سال ماضی کے تباہ شدہ سٹرکچر کو سیدھا کرنے میں گزر گئے اور زیادہ تر وسائل سے اسی کی نذر ہو گئے انہوں نے کہا کہ پی ٹی آئی کی عوام دوستی اور خدمات کا نتیجہ ہے کہ آج حکومت ختم ہونے کے باوجود اسکی مقبولیت بدستور بڑھتی جا رہی ہے آئندہ انتخابات میں پی ٹی آئی بھاری اکثریت کے ساتھ کامیاب ہو گی اور شکست پیداگیر سیاستدانوں کا مقدر بنے گی۔

مزید : کراچی صفحہ اول


loading...