تقدیر پر ایمان لانا ہمارے ایمان کا حصہ ہے ، کیا انسان با اختیار ہے یا مجبور ؟ڈاکٹر خالد ظہیر کی علمی گفتگو

تقدیر پر ایمان لانا ہمارے ایمان کا حصہ ہے ، کیا انسان با اختیار ہے یا مجبور ...
تقدیر پر ایمان لانا ہمارے ایمان کا حصہ ہے ، کیا انسان با اختیار ہے یا مجبور ؟ڈاکٹر خالد ظہیر کی علمی گفتگو

  



تقدیر پر ایمان لانا ہمارے ایمان کا حصہ ہے، اسلام کے ارکانِ خمسہ کے طرح ایمانیات میں چھ چیزیں ہیں جن میں اللہ تعالیٰ، اس کے فرشتوں، اس کی کتابوں، اس کے رسولوں اور مرنے کے بعد پھر زندہ ہونے پر ایمان لانا شامل ہے، اس چھٹی شے تقدیر پر ایمان لانا بھی ضروری ہے۔ دیگر پانچ ارکان کے بغیر تقدیر پر ایمان کا پورا ہونا ممکن نہیں، ایسے ہی تقدیر کے بغیر باقی چیزوں پر ایمان کو بھی مکمل نہیں کہا جاسکتا۔مسئلہ تقدیر کو اسلام کے ابتدائی ایام ہی سے بڑے مشکل مسائل میں شمار کیا جاتا ہے جن میں ہرلمحہ قدم پھسلنے کا اندیشہ رہتا ہے۔ اسی وجہ سے علماء نے اس کے بنیادی اُصولوں کو آیاتِ کریمہ اور احادیث ِشریفہ کی روشنی میں اجمالی طور پر بیان کیا ہے۔اسی حوالے سے معروف دینی سکالر ڈاکٹر خالد ظہیر کی علمی گفتگو دیکھئے۔۔

۔۔۔ویڈیو دیکھیں ۔۔۔

مزید : ویڈیو گیلری /Ramadan Page /Ramadan Timing


loading...