’نوازشریف نے مجھ سے 2008 میں وعدہ کیا تھا کہ وہ مجھے یہ چیز لے کر دیں گے لیکن ابھی تک نہیں ملی ‘گزشتہ روز نوازشریف کے گارڈز کے ہاتھوں پٹنے والے ن لیگی کارکن نے تہلکہ خیز انکشاف کر دیا

’نوازشریف نے مجھ سے 2008 میں وعدہ کیا تھا کہ وہ مجھے یہ چیز لے کر دیں گے لیکن ...
’نوازشریف نے مجھ سے 2008 میں وعدہ کیا تھا کہ وہ مجھے یہ چیز لے کر دیں گے لیکن ابھی تک نہیں ملی ‘گزشتہ روز نوازشریف کے گارڈز کے ہاتھوں پٹنے والے ن لیگی کارکن نے تہلکہ خیز انکشاف کر دیا

  



لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن )گزشتہ روز یوم تکبیر کی تقریب کے دوران ایک ن لیگی کارکن دوڑتا ہوا سٹیج پر آ گیا اور نوازشریف سے ہاتھ ملانے کی کوشش کی لیکن قیادت کے گارڈز نے اسے پکڑ کر خوب ’ٹمبا‘ پھیرا تاہم اس موقع پر مریم نواز انہیں روکنے کی مسلسل کوشش کرتی ہیں لیکن بعد میں نوازشریف نے اسے بلا کر اپنے گلے سے لگایا ۔

اس شخص کا نام ایوب بھٹہ ہے جو کہ بہت پرانا ن لیگی کارکن ہے ، ایوب بھٹہ نے روزنامہ پاکستان سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ اس کا نام ایوب بھٹہ ہے اور اس کا تعلق یوسی 182 سے ہے اور وہ جنرل سیکریٹری بھی ہے ۔ اس کا کہناتھا کہ 1992 سے نوازشریف کے ساتھ ہے ، نوازشریف نے اس سے 2008 میں رہائش لے کر دینے کا وعدہ کیا تھا لیکن ابھی تک نہیں ملی ہے تاہم حمزہ شہباز نے 2016 میں مجھ سے درخواست لی تھی ، کل 28 مئی تھا تاہم سب سے پہلے تو غلطی میری اپنی تھی کیونکہ مجھے اس طرح سٹیج پر نہیں جانا چاہیے تھا ۔ سیکیورٹی گارڈز نے جو مجھے گھونسے اور مکے مارے وہ مجھے پھولوں اور کلیوں کی طرح لگے ، نوازشریف ،شہبازشریف اور مریم باجی پر میری جان قربان ہے ، میں نوازشریف سے پیار کرتاہوں ۔اس کے بعد نوازشریف نے مجھے سٹیج پر دوبارہ بلایا اور یقین دہانی کروائی کہ ایک ہفتے میں جلو موڑ میں مجھے گھر لے کر دیں گے۔ایوب بھٹہ کا کہناتھا کہ نوازشریف نے خود میری دستار بندی کی تھی جبکہ میں نے شہبازشریف کی دستاربندی کی تھی ۔

ویڈیو دیکھیں:

مزید : ڈیلی بائیٹس


loading...