ویڈیو لنک عدالتی سماعت شروع!

ویڈیو لنک عدالتی سماعت شروع!

  

گزشتہ پیر کو اسلام آباد اور کراچی سے ویڈیو لنک کے ذریعے مقدمات کی سماعت ہوئی، پاکستان اس حوالے سے دُنیا کا پہلا ملک بن گیا۔چیف جسٹس، مسٹر جسٹس آصف سعید کھوسہ نے اطمینان کا اظہار کیا اور بتایا کہ اگلی بار کوئٹہ رجسٹری کو منسلک کیا جائے گا اور یہ نظام پھیلایا جائے گا۔ایک سماعت سے متعلقین کو25 سے30 لاکھ روپے کی بچت ہوئی ہے۔عدالت عظمیٰ کے فیصلے کے مطابق مقدمات کی سماعت یقینی بنانے اور بچت کے لئے جدید الیکٹرونک سہولت سے فائدہ اٹھانے کا فیصلہ ہوا تھا،جس کا آغاز ہو گیا، جب چیف جسٹس مسٹر جسٹس آصف سعید کھوسہ کی سربراہی میں ایک مقدمہ کی سماعت ہوئی۔ یہ مقدمہ کراچی اور اسلام آباد سے بیک وقت منسلک تھا، عدالت عظمیٰ کا فاضل بنچ اسلام آباد میں اور اس کیس کے متعلقین کراچی میں تھے اور ای سسٹم کے تحت دلائل دیئے گئے اور فاضل جج اسلام آباد میںسماعت کر رہے تھے۔پیر کی سماعت سے اس کا باقاعدہ ہوا اب اسے مزید وسعت دی جائے گی اور یہ عدالت عالیہ تک بھی رائج ہو سکے گا۔ معاملہ وسائل کا ہو گا،یہ نظام دور دراز سے آنے والوں کے نہ صرف اخراجات بچائے گا، بلکہ مقدمات کے التوا میں بھی کمی ہو گی اور وکلاءاپنی مصروفیات کو اس نظام کے حوالے سے طے کر سکیں گے، جبکہ مقدمہ سے متعلقہ شہری آمدورفت کی صعوبت اور اخراجات سے بچیں گے۔یہ ایک اہم فیصلہ ہے جس پر عمل بھی شروع ہو گیا ہے، ای نظام کو جس قدر جلد ممکن ہو پھیلایا جائے اور اسے ہائی کورٹوں تک بھی جلد توسیع دی جائے،اس نظام کے رائج ہو جانے کے بعد نئے سرکٹ بنچ مقرر کرانے والے مطالبوں کی بھی ضرورت نہیں رہے گی کہ ویڈیو کا یہ نظام وہ ضرورت پوری کر دے گا جو سرکٹ بنچ کے باعث ہونا تھی، توقع کرنا چاہئے کہ نہ صرف یہ نظام کامیاب ہو گا بلکہ وکلاءبھی مکمل تعاون کریں گے کہ ان کا اور ان کے سائلین کا بھی اسی میں فائدہ ہے۔

مزید :

رائے -اداریہ -