عمران منج کی سزا معطل نہ کی گئی تو پھر ہڑتال کرینگے، وکلاءتنظیمیں

عمران منج کی سزا معطل نہ کی گئی تو پھر ہڑتال کرینگے، وکلاءتنظیمیں

  

لاہور (نامہ نگارخصوصی)وکلاءنمائندہ تنظیموں نے جڑانوالہ کے سول جج کو کرسی مارنے کے مقدمہ میں محمد عمران منج ایڈووکیٹ کو انسداد دہشت گردی فیصل آباد کی عدالت سے سزا سنانے کےخلاف آج29مئی اوریکم جون کو ہڑتال کا اعلان کردیا۔ اس بات کا فیصلہ لاہور ہائی کورٹ بار کے اجلاس میںکیاگیا جس میں پاکستان بار کونسل ، پنجاب بار کونسل، لاہور ہائیکورٹ بار ایسوسی ایشن، ڈسٹرکٹ بار ایسوسی ایشنز فیصل آباد اور جڑانوالہ کے نمائندوں نے شرکت کی ،اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ عمران منج کی سزا معطل نہ کی گئی تو یکم جون کو پھر ہڑتال کی جائے گی۔مذکورہ اجلاس سے لاہور ہائی کورٹ بار کے صدر حفیظ الرحمن چودھری ،سیکرٹری فیاض احمد رانجھا ، جڑانوالہ بار کے صدررانا مہتاب ،پنجاب بارکونسل کے ممبران چنگیز خان کاکڑ ،چودھری غلام سرور نہنگ ،جمیل اصغر بھٹی ممبر چودھری محمد اکرم خاکسار اورپنجاب بار کونسل کے وائس چیئرمین چودھری شاہ نواز اسماعیل گجر نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ دہشت گردی کی عدالت میں عرصہ سے مختلف کیسز زیر التواءہیں لیکن عدلیہ نے محمد عمران منج ایڈووکیٹ کے حوالہ سے انتہائی عجلت میں غیر شفاف طریقے سے قانونی تقاضے پورے کئے بغیر سزا سنائی۔ انہوں نے کہا کہ محمد عمران منج ایڈووکیٹ کو دی گئی سزا ملک بھر کی وکلا برادری کے منہ پر طمانچہ ہے۔

مزید :

علاقائی -